Tuesday - 2018 Sep 25
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 183494
Published : 20/9/2016 6:7

رھبر انقلاب اسلامی کا خطاب:

اسلامی اتحاد غدیر کی روشنی میں

حضرت آیت اللہ العظمٰی خامنہ ای نے فرمایا:ایرانی عوام کے پاس آج عالم اسلام میں امامت اور ولایت جیسی قوی،مضبوط اور مستحکم منطق ہے لیکن وہ اپنے حق کےاثبات کو دوسروں کی نفی میں تلاش و جستجو نہیں کرتی،اور امیرالمؤمنین علی (ع) کی پیروی کرتے ہوئے وحدت و یکجھتی کی علمبردار ہے اور تمام اسلامی مذاھب کو اتحاد اور یکجھتی کی طرف دعوت دیتی ہے۔


رھبر معظم نے مسلمانوں کے درمیان باھمی اتحاد و یکجھتی پر مکمل توجہ رکھنے کو غدیر کا ایک اور عظیم درس قراردیتے ہوئے فرمایا : حضرت علی (ع) کو پیغمبر اسلام نے منصوب کیا تھا لیکن جب انھوں نے یہ دیکھا کہ اپنے حق کا مطالبہ کرنے سے ممکن ہے اسلام کو نقصان پہنچے اور اختلاف پیدا ہوجائے تو آپ نے اس کا نہ صرف دعوی کیا بلکہ وہ لوگ جو اس منصب کے حقدار نہ تھےاورجو زبردستی اور طاقت کے زور پر اسلامی معاشرے پر حکومت کررہے تھے آپ نے ان کے ساتھ مسلسل تعاون کیا کیونکہ اسلام کو اتحاد کی ضرورت تھی اوراسی وجہ سے حضرت علی (ع) نے اس عظيم فداکاری کو انجام دیا ۔
رھبر معظم نے اسی سلسلے میں فرمایا: ایرانی عوام کے پاس آج عالم اسلام میں امامت اور ولایت جیسی قوی،مضبوط اور مستحکم منطق ہے لیکن وہ اپنے حق کےاثبات کو دوسروں کی نفی میں تلاش و جستجو نہیں کرتی،اور امیرالمؤمنین علی (ع) کی پیروی کرتے ہوئے وحدت و یکجھتی کی علمبردار ہے اور تمام اسلامی مذاھب کو اتحاد اور یکجھتی کی طرف دعوت دیتی ہے۔
رھبر معظم نے امت اسلامی کو دشمنوں کے مکروفریب کے مقابلے میں ھوشیار رہنے کی تأکید کرتے ہوئے فرمایا: دشمن عالم اسلام میں اختلاف کا بیج بونے کی ہر ممکن کوشش کررہا ہے،اور غدیر کا عظیم درس ، اختلاف اور تفرقہ پیدا کرنے والوں کے خلاف جد وجھد پر مبنی ہے، اور اس عمل کو انجام دینے کے لئے ضروری ہےکہ مسلمان ایک دوسرے کے مقدسات کی اھانت کرنے اور ایک دوسرے کے مذھبی جذبات کو مجروح کرنے سے اجتناب کریں اور جیسا کہ حج کے پیغام میں بیان کیاہے کہ مسلمان مفکرین امت اسلامی کےدرمیان اتحاد اور اسلامی انسجام کو مضبوط و مستحکم بنا کر عالم اسلام «شیعہ اور سنی» کے درمیان اختلاف ڈالنے کے سامراجی طاقتوں کے ناپاک منصوبوں کو ناکام بنادیں۔
رھبر معظم انقلاب اسلامی نے اسلام دشمن عناصر اور سامراجی طاقتوں کے مکر وفریب کے بارے میں ایرانی عوام کی آگاھی کو انقلاب اسلامی کی کامیابی کا اھم راز قراردیتے ہوئے فرمایا: ایرانی عوام کا خداوند متعال کی ذات پر ایمان و توکل ،ذمہ داری کا احساس، دشمن کے ناپاک منصوبوں کے بارے میں مکمل ھوشیاری و آگاھی اورگذشتہ 29 برسوں میں سامراجی طاقتوں کی تمام گھناؤنی سازشوں کے مقابلے میں ایرانی عوام کی کوششوں کوکامیاب قراردیتے ہوئے فرمایا:ان کامیابیوں کو جاری رکھنے کے لئے ہمیں کبھی دشمن کو فراموش نہیں کرنا چاہئے،اور نہ ہی میدان کو کبھی خالی چھوڑنا چاہئے ۔
29/12/2007 کو عید سعید غدیر کے موقع پر خطاب سے اقتباس۔
leader,ir


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Tuesday - 2018 Sep 25