Wed - 2018 Sep 19
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 183560
Published : 26/9/2016 22:41

شیخ حر عاملی نے وسائل الشیعہ کا تحفہ مذھب کے نام کیا

شیخ حر عاملی، نے وسائل الشیعة کو 20 سال کے طویل عرصے میں اکٹھا کیا ہے اور یہ کتاب سن 1082 هجری میں مکمل ہوئی ہے،یہ کتاب امتیازی اور منفرد خصوصیات کی حامل ہے اور شرعی احکام کے سلسلے میں تمام مجتہدین اور مراجع تقلید کا مأخذ و مرجع سمجھی جاتی ہے۔


ولایت پارٹل:وسائل الشیعہ کا مکمل نام«تفصیلُ وَسائل الشیعة إلی تَحصیلِ مسائل الشّریعة»ہے،جو شیخ حر عاملی(متوفٰی 1104 ھجری) کی تألیف ہے،یہ کتاب کتب اربعہ سمیت شیعہ کتب حدیث میں منقولہ ان احادیث کا مجموعہ ہے جن کا تعلق فقہی احادیث سے ہے،اس کتاب میں 36000 حدیثیں مختلف فقہی موضوعات کے متعلق نقل کی گئی ہیں اور ہر موضوع کو ایک باب کا عنوان قرار دیا گیا ہے،اس تألیف کی اہمیت کے پیش نظر متعدد معاجم،تراجم اور شروحات اس پر لکھی گئی نیز اس کی تلخیصات بھی دستیاب ہیں۔
کتاب«وسائل الشیعة» احکام شرعیہ اور فقہ کے 50 ابواب میں رسول اللہ(ص) اور اہل بیت(ع) سے منقول معتبر حدیثوں کا مجموعہ ہے اور کتاب کے آخر میں کتاب کے مصادر و مآخذ،اسناد اور رجال و رواة کے بارے میں مفصل بحث ہوئی ہے۔
شیخ حر عاملی، نے وسائل الشیعة کو 20 سال کے طویل عرصے میں اکٹھا کیا ہے اور یہ کتاب سن 1082 هجری میں مکمل ہوئی ہے،یہ کتاب امتیازی اور منفرد خصوصیات کی حامل ہے اور شرعی احکام کے سلسلے میں تمام مجتہدین اور مراجع تقلید کا مأخذ و مرجع سمجھی جاتی ہے۔
تألیف کے محرکات
مؤلف کتاب کے مقدمہ میں لکھتے ہیں:
  میں عرصہ دراز سے سوچ رہا تھا کہ شرعی احادیث اور فرعی احکام کی نصوص پر مشتمل ایسی کتاب تألیف کروں جو علماء کے نزدیک قابل اعتماد ہو کیونکہ اگر اس قسم کی کتابیں ایک طرف سے طویل و عریض اور ان میں منقول احادیث مکرر،ہیں تو دوسری طرف سے یہ تمام احادیث مکرر ہونے کے علاوہ فقہ اور فقہاء کے کام نہیں آتیں،چنانچہ میں نے شرعی احکام اور مسائل کے بارے میں احادیث جمع کرنے کا سلسلہ شروع کیا اور اس سلسلے میں کوئی دقیقہ فروگذاشت نہیں کیا اور سوائے معتبر و مشہور کتب کے،کسی کتاب سے حدیث نقل نہیں کی۔
مضامین و مندرجات
یہ کتاب شرعی احکام اور فرائض و آداب کے سلسلے میں 36000 حدیثوں پر مشتمل ہے اور یہ حدیثیں معتبر شیعہ کتب حدیث اور قدمائے اصحاب کے اصول اولیہ سے منقول ہیں۔
خصوصیات
1۔تمام حدیثیں سند کے ساتھ نقل ہوئی ہیں۔
2۔ایک موضوع سے متعلق تمام احادیث کو ایک ہی باب میں نقل کیا گیا ہے۔
3۔احادیث ـ بالخصوص متعارض احادیث ـ کے ذیل میں مؤلف نے تشریح فرمائی ہے۔
4۔مؤلف نے خود ان احادیث سے احکام استخراج کئے ہیں اور ابواب کے لئے عنوان متعین کئے ہیں۔
5۔متعدد احکام پر مشتمل تفصیلی احادیث کی متعلقہ احکام کی ترتیب سے تقطیع کی گئی ہے۔
6۔ہر باب کو مناسب اور متعلقہ ابواب کی طرف پلٹایا گیا ہے،ان ارجاعات کو  نئی طباعت میں مصححین و محققین نے پاورقی حاشیوں میں واضح کیا ہے۔
7۔ہر باب کا آغاز صحیح اور معتبر احادیث سے کیا گیا اور مرسل یا ضعیف حدیثوں کو ابواب کے آخر میں درج کیا گیا ہے۔
8۔مصادر و مأخذ ذکر کرنے اور بعض علوم و رجال سے متعلق مباحث کے بارہ فوائد بیان کئے گئے ہیں۔
اردو ترجمہ
 کچھ سال پہلے پاکستان کے شیعہ عالم دین مولانا محمد حسین نجفی نے وسائل الشیعہ کا اردو زبان میں ترجمے کا کام شروع کیا، جس کا نام «مسائل الشریعہ ترجمہ و حواشی وسائل الشیعہ» رکھا،سن  1426 ھجری تک اس کی سولہ (16) جلدوں کے ترجمہ کا کام مکمل ہو چکا تھا جن میں سے چھ (6) جلدیں چھپ چکی ہیں،مختلف ابواب کا ترجمہ کرتے ہوئے ہر باب کی تکراری احادیث کو حذف کیا گیا ہے نیز حسب ضرورت حواشی بھی لگائے گئے ہیں۔ ہر باب کے ترجمہ کے شروع کرنے سے پہلے تکراری اور حذف شدہ احادیث کی تعداد بیان کی گئی ہیں،آخری ایام میں مکمل ہو کر بیس (20) جلدوں میں«مرکز السبطین سرگودھا» کی طرف سے چھپ چکی ہے۔






آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Wed - 2018 Sep 19