Sunday - 2018 july 22
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 184156
Published : 14/11/2016 16:17

موصل میں داعش کا آخری حربہ عورتوں کو اتارا میدان میں

مسلسل شکست سے دوچار داعش نے خواتین کے ذریعے خودکش حملے کروانا شروع کردئے ہیں،دہشت گرد ٹولہ عراق میں مسلسل شکست کی وجہ سے آخری سانسیں لے رہا ہے اور اپنی بقا کی خاطر خواتین کو خودکش دھماکوں کے لئے استعمال کرنا شروع کردیا ہے۔



ولایت پورٹل:عراقی فوج اور عوامی رضا کار فورسز نے داعش پر کاری ضرب لگائی ہے جس کی وجہ سے یہ گروہ اب زندگی کی آخری سانسیں لے رہا ہے اور اپنی بقا کے لئے خواتین کو قربان کرنا شروع کردیا ہے،دہشت گردوں نے عراقی فوج کے ساتھ مقابلے کے لئے خودکش بمبار خواتین کو میدان میں بھیجنا شروع کردیا ہے،اس سے پہلے داعش نے میدان جنگ میں عورتوں کو خودکش بمبار کے طور پر استعمال نہیں کیا تھا،خودکش بمبار عورتوں کا میدان میں آنا عراقی فوج کے لئے ایک نیا چیلنچ تصور کیا جارہا ہے تاہم یہ خیال کیا جا رہا ہے کہ عراقی فوج اس پر بھی قابو پالے گی،واضح رہے کہ عراقی فوج کامیابی کے ساتھ موصل آپریشن میں مصروف ہے اور اب تک کئی اہم علاقوں کو داعش کی چنگل سے آزاد کرچکی ہے۔
تسنیم


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Sunday - 2018 july 22