Friday - 2018 Dec 14
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 185906
Published : 25/2/2017 17:15

عالمی باکسر چیمپئن محمد علی کے بیٹے کو بھی نہیں بخشا نسل پرستی کی آگ نے

عالمی باکسر چیمپئن محمد علی کے بیٹے کو امریکی ریاست فلوریڈا کے ائرپورٹ پر صرف اس لیے روک کر پوچھ تاچھ کی گئی کیوں کہ وہ مسلمان ہیں۔


ولایت پورٹل:ایک امریکی وکیل نے بتایا کہ عالمی باکسر چیمپئن محمد علی کے بیٹے محمد علی جونیور اپنی ماں کے ساتھ  جامائیکا سے واپس آرہے تھے تو فلوریڈا ائیر پورٹ پر جونیور کو وہاں پر موجود ہجرت پولیس اہلکاروں نے روک لیا اور دو گھنٹے تک ان سے پوچھ تاچھ کرتے رہے یاد رہے کہ محمد علی جونیور کے پاس امریکی پارسپورٹ ہے لیکن جب پولیس کو ان کے مسلمان ہونے کا پتا چلا تو ان سے پوچھ تاچھ شروع کر لی، ان کی ماں کا کہنا ہے کہ ان کو دو گھنٹے تک اپنے بیٹے کی کوئی خبر نہیں تھی، قابل ذکر ہے کہ محمد علی کہتے ہیں کہ ان سے ایک سوال یہ کیا گیا کہ وہ  کیا وہ مسلمان  ہیں اوراپنا نام کہاں سے لائے ہیں؟!!!
ان کا کہنا ہے کہ وہ فلوریڈا ائیرپورٹ پولیس کے خلاف شکایت کریں گے
مشرق




آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Friday - 2018 Dec 14