Tuesday - 2018 Dec 11
Languages
13137:نتائج: 0.155سیکنڈ میں
جستجو برای :
موجودہ اسرائیلی حکومت غزہ میں ذلت آمیز شکست کے بعد یہ تاثر دینا چاہتی ہے کہ گولان ہائٹس کا محاذ اس کے مکمل کنٹرول میں ہے۔ لیکن اسرائیل کے حالیہ حملوں میں شام کا فضائی ڈیفنس سسٹم ابھر کر سامنے آیا ہے اور اب اسرائیل کی ایک اور کمزوری واضح ہو چکی ہے۔
یمنی فوج اور عوامی رضاکار فورسز نے سعودی اتحادی افواج کے ٹھکانوں پر زلزال 1نامی بیلسٹک میزائل سے حملہ کیا ہے۔
شام کے صدر بشار اسد نے کہا ہے کہ مغربی ملکوں کی سازشوں اور منصوبوں کی ناکامی اور شام و شمالی کوریا جیسے آزاد و خود مختار ملکوں کی استقامت بین الاقوامی میدان میں تبدیلیاں لاسکتی ہے۔
غرب اردن کے شہر طولکرم میں غاصب صیہونی اہلکاروں نے ایک اور فلسطینی کو گولی مار کر شہید کردیا ہے۔
اقوام متحدہ کے مختلف اداروں کے عہدیداروں نے ایک مشترکہ بیان میں یمن پر سعودی اتحاد کے حملے بند کئے جانے کا مطالبہ کیا ہے۔
سپاہ پاسداران انقلاب اسلامی کی قدس بریگیڈ کے سربراہ جنرل قاسم سلیمانی نے عراق میں اہلسنت مفتی سے ملاقات اور گفتگو کی۔
ایران کے صدر کا کہنا ہے کہ اگر امریکا کسی دن ایرانی تیل کی فروخت کو روکنا چاہے تو وہ جان لے کہ خلیج فارس سے کسی کا تیل نہیں گزرسکے گا۔
ہم لوگوں کو اگر امام حسن(ع) کے سچے مُحب اور پیروکار ہونے کا دعویٰ ہے تو ہمیں ہوشیار رہنے کی ضرورت ہے کہ وہ جگہ کہ جہاں ہماری جان،مال،آبرو، دنیاوی منصب کو خطرہ لاحق ہوجائے تو ہم فرمانبردار ہی رہیں ایسا نہ ہو کہ اگر ہماری جان، مال، یا منصب کو خطرہ لاحق ہوجائے تو ہم اپنا رنگ تبدیل کردیں اور نتیجے میں وقت کا امام تنہا رہ جائے۔ہم لوگوں کا دشمن ہماری تاریخ کو خوب اچھی طرح جانتا ہے اور اس سے مسلسل سبق لینے کے فراق میں ہے لیکن ہم اپنی تاریخ کو بھول بیٹھے ہیں۔
کُتب احادیث میں پہلے گروہ کے متعلق کہ جو 313 افراد و جانثاروں پر مشتمل ہوگا اس تعداد میں ہی کیوں محدود ہے؟ اس کی کوئی خاص وجہ نہیں ملتی فقط جو تشبیہ یا تمثیل روایات میں ملتی ہے وہ یہ ہے کہ حضرت حجت(عج) کے ان اصحاب کی تعداد جنگ بدر میں موجود مجاہدین کے جتنی ہوگی۔تاکہ ظہور حضرت حجت(عج) میں صدر اول کے مجاہدین کی قربانیوں کی یاد بھی تازہ رہے چونکہ جنگ بدر ہی ایک ایسی جنگ تھی جو مسلمانوں نے بڑی بے سر و سامانی کے عالم میں لڑی تھی جن کی امید اور اعتماد صرف اللہ کی ذات تھی اور صرف ایمانی قوت کے سہارے معرکہ جنگ میں داخل ہوئے تھے اور ان کا مقصد صرف اسلام کی حفاظت اور پرچم توحید کی سربلندی تھی۔
امریکہ میں تعینات سعودی سفیر کا کہنا ہے کہ ایران نے لبنان میں حزب اللہ بنا کر عرب کی پشت میں خنجر گھونپا ہے کیونکہ حزب اللہ مکمل طور پر ولی فقیہ کی تابع ہے۔
  • کل نتائج : 13137