Saturday - 2018 June 23
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 187528
Published : 29/5/2017 11:51

گھر والوں کو اطلاع دیئے بغیر شہدائے الدراز کی تدفین

آل خلیفہ کے سیکورٹی اہلکاروں نے الدراز کے شہداء کو ان کے گھر والوں کو اطلاع دیئے بغیر ہی دفن کر دیا۔

ولایت پوٹل:بحرین سے موصولہ رپورٹس کے مطابق بحرین کی آل خلیفہ حکومت کے سیکورٹی اہلکاروں نے الدراز میں آیت اللہ شیخ عیسی قاسم کے گھر پر فوج کے حملے میں شہید ہونے والے تین بحرینیوں کو المحرق قبرستان میں اور دو شہداء کو الماحوذ قبرستان میں دفن کر دیا،شہداء کے گھر والوں کو تدفین کی اطلاع نہیں دی گئی۔
ساتھ ہی یہ خبر بھی موصول ہوئی ہے کہ بحرین کے کئی علاقوں میں اتوار کو آل خلیفہ حکومت کی کارروائیوں کے خلاف مظاہرے ہوئے،مظاہرین نے آل خلیفہ کے ظالمانہ اقدامات کی مخالفت اور آیت اللہ شیخ عیسی قاسم کی حمایت کا اعلان کیا تاہم مظاہرے پرامن رہے اور کسی طرح کے ناخوشگوار واقعے کی اطلاع نہیں ہے۔
دوسری جانب ایران میں بحرین کے مذہبی پیشوا آیت اللہ شیخ عیسی قاسم کے نمائندے شیخ عبداللہ الدقاق نے کہا ہے کہ عراقی حکومت کی جانب سے آیت اللہ شیخ عیسی قاسم کو نجف اشرف جلا وطن کرنے کی درخواست مسترد کئے جانے کے بعد حکومت بحرین انھیں ترکی یا متحدہ عرب امارات جلاوطن کرنا چاہتی ہے۔
بحرینی شیعوں کے مذہبی رہنما کے نمائندے نے اس بات کا ذکر کرتے ہوئے کہ آیت اللہ شیخ عیسی قاسم کو اپنے ملک اور اپنے عوام کے درمیان رہنا چاہئے، انھیں کسی بھی دوسرے ملک میں جلاوطن کرنے کی مخالفت کی ہے۔
بحرین کے مذہبی پیشوا آیت اللہ شیخ عیسی قاسم کو آل خلیفہ کی کٹھ پتلی عدالت کی جانب سے ایک سال قید اور ان کے اثاثے ضبط کرنے کے فیصلے کے بعد شروع ہونے والے شدید احتجاجی مظاہروں کے بعد آل خلیفہ کے فوجیوں نے منگل کو الدراز میں ان کی رہائش گاہ پر حملہ کر دیا تھا۔
اس حملے میں چھے افراد شہید اور دو سو سے زیادہ زخمی ہو گئے جبکہ تقریبا تین سو افراد کو گرفتار کر لیا گیا۔

سحر



آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Saturday - 2018 June 23