Tuesday - 2018 Oct. 23
Languages
12634:نتائج: 0.154سیکنڈ میں
جستجو برای :
جس طرح صدر اسلام میں خوارج نے مسلمانوں کو کافر ٹہرایا اور ان کی جان مال و ناموس پر تجاوز کیا اسی طرح بلکہ اُس سے بھی زیادہ دردناک طریقہ سے آج ایک گروہ(وہابی) امت مسلمہ کے عقیدوں،جان،مال و ناموس کو پامال کررہے ہیں لیکن جہاں اندھیرا زیادہ ہوتا ہے اللہ اسی جگہ نور کا زیادہ اہتمام و انتظام کرتا ہے جیسا کہ تاریخ شاہد ہے کہ جہالت و گمراہی کا اندھیرا سب سے زیادہ مکہ میں تھا لہذا اللہ نے اپنا آخری نبی بھی اس معاشرہ میں بھیجا اور نور ایمان و وحی سے ظلمت و گمراہی کے اندھیروں کا دور بھگا دیا۔
سعودی عرب کی موجودہ سیاسی و سماجی صورتحال انتہائی مخدوش حالت میں ہے۔ یہاں کے عوام عدم تحفظ کی شکار ہوچکی ہے۔شاہی خاندان کو پہلے ہی دو گروہوں میں تقسیم کیا جاچکاہے۔سعودی عرب میں رہنے والے اقلیتی طبقے کو دیوار سے لگانے کی کوشش جاری ہے۔ جیسا کہ القطیف شہر کو سعودی حکومت کے جارح اور سفاک فوجی اہلکاروں نے اپنے ظلم و تشدد کا ہدف بنایا ہوا ہے ۔
اسی بزم میں مدینہ کا رہنے والا ایک شخص بھی تھا اس نے اعتراض کیا کہ حضور!رسول اللہ(ص) کی یہ حدیث ہم تک بھی پہونچی اور ہم نے بھی اس نسخہ کو آزمایا لیکن ہمیں کوئی فائدہ نہیں ہوا۔یہ سن کر امام صادق علیہ السلام کی چہرہ اقدس پر ناراضگی کے آثار نمودار ہوئے اور اس سے فرمایا: اللہ تعالٰی نے اس دوا میں ان لوگوں کے لئے شفا رکھی ہے کہ جو اس(اللہ) کی ذات پر اور اس کے رسول و آل رسول(ص) پر دل کی گہرائی سے ایمان رکھتے ہوں ور جو لوگ رسول و آل رسول(ص) کے مُحب نہیں ہیں انہیں یہ دوا ذرہ برابر فائدہ نہیں پہونچائے گی لہذا یہ سن کر اس شخص نے اپنا سر جھکا لیا۔
شیعہ عقیدہ کی رو سے حضرت صاحب الامر(عج) کی ولادت ہوچکی ہے اور آپ سن 255 ہجری میں دنیا میں تشریف لاچکے ہیں اور آج بھی بحکم خدا پردہ غیب میں ہیں یعنی آپ کی حقیقی عمر تو بہت زیادہ ہے لیکن ظاہری طور پر ایسا لگے گا کہ آپ ابھی 40 برس کے ہی ہوئے ہیں۔
پاکستان کے شہرڈیرہ غازیخان میں عزاداروں سے بھری بس حادثے کا شکار ہوگئی ہے۔
شام کے صوبہ ادلب کے شہرترمانین میں کیمیائی ہتھیار اور دھماکہ خیز مواد تیار کرنے والے کارخانے میں زور دار دھماکہ ہوا.
جرمنی کی خارجہ تعلقات پر مبنی کمیٹی نے سعودی عرب کے سفارتکاروں کو ملک بدر کرنے کا مطالبہ کیا ہے۔
سعودی اتحاد کے جنگی طیاروں نے اتوار کی صبح صوبہ حجہ کے شہر عبس میں ایک پرائیویٹ گاڑی کو نشانہ بنایا ہے۔
آج اسرائیل کی دھمکیوں پر کسی کی توجہ نہیں کیونکہ سبھی جانتے ہیں کہ یہ دھمکیاں کھوکھلی ہیں۔
امریکا نے قانونی جنگ میں شکست کھانے کے بعد اپنے دفاعی اور عجلت پسندانہ نیز سفارتی آداب کے منافی ردعمل میں عالمی عدالت انصاف کے فیصلے کو بیہودہ قراردیا ۔
  • کل نتائج : 12634