Saturday - 2018 Sep 22
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 187946
Published : 20/6/2017 13:26

امریکہ پچھلے ۳۰ برسوں سے ہمارے خلاف سازشوں میں مصروف ہے:ایرانی چیف جسٹس

آیت اللہ لاریجانی نے مزید کہا کہ فلسطین عالم اسلام میں وحدت کی مثال ہے اور ہم سب کو چاہئے عالمی القدس کی ریلدیوں میں بھرپور انداز میں شرکت کر کے دنیا کو فلسطینی قوم کی مشکلات اور مشقت سے آگاہ کریں۔

ولایت پورٹل:ایران کے چیف جسٹس نے کہا کہ امریکی سینیٹ کی جانب سے نئی پابندیوں سے ایران کے خلاف امریکی دشمنی کی ایک اور شکل سامنے آئی ہے۔
انہوں نے بتایا کہ امریکی صدر کے حالیہ دورہ سعودی عرب اور علاقائی ممالک کو اسلامی جمہوریہ ایران کے خلاف مشتعل کرنا بھی ایران مخالف امریکی دشمنی کی ایک دوسری مثال تھی
ایرانی چیف جسٹس نے ایران مخالف امریکی وزیرخارجہ کی ہرزہ سرائیوں کی شدید مذمت کرتے ہوئے کہا کہ سیکورٹی فورسز بشمول حساس ادارے اور پاسداران انقلاب کو ہوشیار رہنا ہوگا اور ملک دشمنوں کے مذموم عزائم پر نظر رکھنا ہوگی اور اسی کے  ساتھ عدلیہ بھی انسانی حقوق کے نام نہاد نعرہ بلند کرنے والوں کی سازشوں کا بھی ہروقت مقابلہ کے لئے تیار ہے۔
انہوں نے رمضان المبارک کے جمعۃ الوداع کے موقع پر عالمی یوم القدس کے حوالے سے بتایا کہ عالمی یوم القدس فلسطینی عوام کی مظلومیت کی علامت ہے۔
آیت اللہ لاریجانی نے مزید کہا کہ فلسطین عالم اسلام میں وحدت کی مثال ہے اور ہم سب کو چاہئے عالمی القدس کی ریلدیوں میں بھرپور انداز میں شرکت کر کے دنیا کو فلسطینی قوم کی مشکلات اور مشقت سے آگاہ کریں۔
انہوں نے فرمایا کہ ایرانی قوم آخری دم تک ملک کے دفاع اور اسلامی جمہوری نظام کے لئے کھڑی ہے اور دشمنوں کو کسی بھی طرح کی غلطی کرنے کا موقع نہیں دے گی۔
ایرانی چیف جسٹس نے کہا کہ امریکہ تو گزشتہ 30 سالوں سے ایران کو نقصان پہنچانے کے خواب و خیال میں ہے مگر وہ ہر بار اپنے شیطانی عزائم میں ناکام ہوچکا ہے۔
انہوں نے مزید کہا کہ ہم بانی انقلاب حضرت امام خمینی (رح) کی رہنمائی اور قائد اسلامی انقلاب حضرت آیت اللہ خامنہ ای کی ہدایات کی پیروی کرتے ہوئے ملک کے دفاع کے لئے ہمیشہ میدان میں موجود رہیں گے۔
شبستان


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Saturday - 2018 Sep 22