Monday - 2018 july 16
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 187956
Published : 20/6/2017 14:47

کسی کو کوئی بات بتانے سے پہلے اسے تین فلٹر سے گزاریئے

تو اس کےپڑوسی نے کہا کہ: اگر اس بات میں نہ حقیقت ہے، نہ خوشی ہے اور نہ فائدہ، تو تم اسے اپنے ہی پاس رکھو،اور ہاں! تم بھی جلد از جلد اسے بھولنے کی کوشش کرو۔

ولایت پورٹل:ایک مرتبہ ایک آدمی اپنے پڑوسی کے پاس گیا اور کہنے لگا:سنئے! میں  آپ کو ایک بات بتانا چاہتا ہوں، میرا ایک دوست آپ کے بارے میں کہہ رہا تھا کہ:۔۔۔اس کے پڑوسی نے اس کی بات کاٹ کر کہا: اس سے پہلے کہ تم کوئی بات سناؤ، پہلے یہ بتاؤ کہ کیا تم نے اپنی اس بات کو تین فلٹر سے گزارا ہے؟
تو وہ پوچھنے لگا کہ :وہ  کون سے تین فلٹر؟
تو اس نے کہا:اول تو حقیقت کے فلٹر سے. کیا تم مطمئن ہو کہ جو کچھ تم بتانا چاہتے ہو وہ حقیقت رکھتا ہے؟
کہنے لگا کہ:نہیں… میں نے تو صرف سنا ہے،کسی نے مجھے یہ بات بتائی ہے۔
تو وہ شخص سر ہلا کر کہنے لگا:پھر تو تم نے یقیناً دوسرے فلٹر (خوشی کے فلٹر) سے اسے گزارا ہوگا،یعنی جو کچھ تم بتانا چاہتے ہو، چاہے وہ حقیقت نہیں بھی رکھتا ہو، لیکن میرے لئے خوشی کاباعث ہوگا۔
تو کہنے لگا کہ:میرے خیال میں شاید تمہیں اس سےخوشی نہ ملے۔
اچھا! اگر مجھے اس سے خوشی نہیں ملتی تو شاید تیسرے فلٹر یعنی فائدے سے اسے گزارا ہوگا،جو کچھ مجھے بتانا چاہتے ہو کیا وہ میرے فائدے میں ہے؟ کیا اس کے سننے سے مجھے کوئی فائدہ ملے گا؟
اس نے جواب دیا:نہیں! اس میں کوئی فائدہ بھی نہیں۔
تو اس کےپڑوسی نے کہا کہ: اگر اس بات میں نہ حقیقت ہے، نہ خوشی ہے اور نہ فائدہ، تو تم اسے اپنے ہی پاس رکھو،اور ہاں! تم بھی جلد از جلد اسے بھولنے کی کوشش کرو۔

راہ امید


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Monday - 2018 july 16