Friday - 2018 Dec 14
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 190047
Published : 17/10/2017 16:54

روہنگیا مسلمانوں کے 288گاؤں جلائے جاچکے ہیں:ہیومن رائٹس واچ

ہیومن رائٹس واچ نے روہنگیا مسلمانو ں پر ہونے والے مظالم کے سلسلہ میں میانمار حکومت کو کڑی تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے اعلان کیا ہے کہ اس ملک میں مسلمانوں کے دو سو اٹھاسی دیہات نظر آتش کیے جاچکے ہیں۔


ولایت پورٹل
:ہیومن رائٹس واچ نے اعلان کیا ہے کہ میانمار میں اقلیتی فرقے سے تعلق رکھنے والے روہنگیا مسلمانوں کے دو سو اٹھاسی گاؤں  نظر آتش کیے جاچکے ہیں جبکہ فوج نے ان کے خلاف کاروائی ختم ہونے کا اعلان کردیا ہے لیکن  حملے ابھی بھی جاری ہیں  سیٹلائٹ سے لی جانے والے تصاویر میں صاف طور دکھائی دے رہا ہے کہ ان کے خلاف کیسے منصوبہ بند طریقہ سے ظلم کیا جارہا ہے اس لیے کہ انھیں علاقوں میں  بدھشٹوں کے گاؤں  بالکل محفوظ ہیں ادھر ایمنسٹی انٹرنیشنل کے سروے کے مطابق 866 دیہاتوں سے لوگ بھاگ کر بنگلادیش جاچکے ہیں  اس کے علاوہ ہیومن رائٹس واچ نے یہ اعلان بھی کیا ہے کہ  سیکڑوں دیہاتوں کو تو  میانمار کی فوج  ہی نے تباہ کر دیا ہے  نیز ان علاقوں میں رہنے والے مسلمانوں پر اس قدر ظلم ڈھائے ہیں کہ وہ بھاگنے پر مجبور ہو گئے ہیں۔
فارس



آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Friday - 2018 Dec 14