Wed - 2018 Nov 21
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 190078
Published : 18/10/2017 19:3

مسلمانوں جیسا ہونا بھی جرم

برطانیہ میں رہنے والے بہت سارے غیر مسلموں کو صرف اس لیے پریشان کیا جاتا ہے کہ ان کی شکل مسلمانوں جیسی ہوتی ہے۔


ولایت پورٹل:انڈیپنڈنٹ اخبار  نے اپنی آج کی رپورٹ میں لکھا ہے کہ  برطانیہ میں یورپی یونین سے نکلنے کے لیے ہونے والے ریفرنڈم کے دوران یہاں اسلام ہراسی میں قابل ذکر حد تک اضافہ ہوا ہے  جس میں  بہت سارے لوگ بغیر کسی وجہ  کے اور بے بنیاد الزامات کی بنیادپر اسلام دشمنی کا شکار ہوئے ہیں یہاں تک کہ بعض متأثرین کا کہنا ہے کہ  چونکہ ان کی شکلیں مسلمانوں سے ملتی جلتی ہیں  لہذا انھیں  دہشتگرد یا خائن کہا جاتا ہے ،اسلام ہراسی کے شکار ایک آدمی کا کہنا تھا کہ یہ لوگ سوچتے ہیں کہ میں مسلمان ہوں جبکہ میں بے دین ہوں  دوسرا یوں کہتا ہے کہ جب میں سے نے داڑھی رکھی ہے  تو یہ اسلام دشمن لوگ مجھے مسلمان سمجھنے لگے ہیں جبکہ میں مسلمان نہیں ہوں ،رپورٹ کے مطا بق اسلام ہراسی کا شکار ہونے والے اکثر افراد کا کہنا ہے کہ چونکہ وہ مسلمانوں جیسے دکھائی دیتے ہیں اس لیے ان پر حملے ہورہے ہیں ، ایک آدمی کہتاہے کہ ٹرین میں سفر کر رہا تھا کہ کچھ لوگوں نے مجھے برابھلا کہنا شروع کردیا اور کہا کہ تم مسلمان ہو جب میں نے کہا کہ میں مسلمان نہیں ہوں تو انھوں نے کہا کہ تم سب ایک ہی ہو ، تم بے گناہ لوگوں کو قتل کرتے ہو ، شام میں چلے جاؤ داعشی دہشتگردو۔
ایرنا



آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Wed - 2018 Nov 21