Friday - 2018 Nov 16
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 190351
Published : 4/11/2017 18:55

سعودی دباؤمیں آکر سعد حریری نے دیا استعفٰی

سیاسی مبصرین کا متفق علیہ نظریہ یہی ہے کہ سعد حریری کے استعفٰی کے پیچھے سعودی عرب اور امریکہ کا ہاتھ ہے اور یہ دونوں ملک لبنان میں سیاسی بحران پیدا کرنا چاہتے ہیں۔


ولایت پورٹل:رپورٹ کے مطابق لبنان کے وزیر اعظم سعد حریری نے اپنے منصب سے استعفٰی دیدیا ہے،لیکن اس استعفٰی کے پیچھے کس کا ہاتھ ہے اس راز سے پردہ اٹھانے کے لئے ہم ایک چھوٹی سی رپورٹ پیش کررہے ہیں:
موصولہ اطلاعات کے مطابق سعد حریری نے پئے در پئے سعودی عرب کے دو دورے کئے ہیں جس میں انھوں نے سعودی عرب کے اعلٰی حکام اور وزراء سے ملاقاتیں بھی کیں۔
امین خطیط لبنان کے رٹائرڈ فوجی جنرل نے العالم کو دیئے اپنے ایک انٹریو میں کہا کہ سعد حریری سعودی حکومت کی طرف سے کافی دباؤ میں چل رہے تھے۔
انھوں نے اس امر کی بھی تصریح کی کہ سعد حریری کا استعفٰی لبنان کے انتخابات میں تاخیر کا سبب بنے گا۔
اسی طرح لبنان کے ایک روز نامہ نگار قاسم قصیر کا بھی یہی ماننا ہے کہ سعد حریری کے استعفٰی کی وجہ سعودی دباؤ ہے،اور یہ لبنان کے حالات خراب کرنے کی سعودی سازش کا ایک اہم حصہ ہے،اور اسی طرح سعد حریری کا استعفیٰ لبنان کو ایک کھلا پیغام ہے کہ ہم  لبنان کے حالات کو کس طرح کنٹرول کرتے ہیں؟
اور اس کے علاوہ سیاسی مبصرین کا متفق علیہ نظریہ یہی ہے کہ سعد حریری کے استعفٰی کے پیچھے سعودی عرب اور امریکہ کا ہاتھ ہے اور یہ دونوں ملک لبنان میں سیاسی بحران پیدا کرنا چاہتے ہیں۔
العالم




آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Friday - 2018 Nov 16