Thursday - 2018 Nov 15
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 190355
Published : 5/11/2017 9:47

بریکنگ نیوز:

سعودی عرب کے 41 شہزادے اور وزیر حراست میں؛فرار کے خوف سے پروازیں کی گئیں کینسل

اگرچہ سعودی ذرائع ابلاغ تو یہ باور کرانے میں لگے ہوئے ہیں کہ سعودی بادشاہ نے مالی فساد سے نمٹنے کے لئے یہ اقدام کئے ہیں جبکہ سیاسی مبصرین کا خیال ہے کہ یہ سب کھیل محمد بن سلمان کی بادشاہت کی بساط کو بچھانے کے لئے کھیلا جارہا ہے۔


ولایت پورٹل:پارس ٹوڈے کی رپوٹ کے مطابق سعودی حکومت نے ایک نئی کمیٹی تشکیل دی ہے جس میں مالی فساد سے نمٹنے کے لئے 11 شہزادے اور 30 سابق و موجودہ وزراء کو حراست میں لے لیا گیا ہے۔
یاد رہے کہ یہ کمیٹی سعودی ولیعہد محمد بن سلمان کی سرپرستی میں تشکیل پائی ہے جس نے سنیچر سے ہی اپنا کام شروع کرتے ہوئے صرف چند گھنٹوں کے اندر ہی 41 لوگوں کو حراست میں لےلیا ہے۔
سعودی اخبار الحیات کی رپورٹ کے مطابق محروسہ لوگوں میں سعودی کی کئی بڑی شخصیات جیسے ولید بن طلال،ولید الابراھیم،عادل فقیہ جیسے لوگ شامل ہیں۔
اگرچہ سعودی ذرائع ابلاغ تو یہ باور کرانے میں لگے ہوئے ہیں کہ سعودی بادشاہ نے مالی فساد سے نمٹنے کے لئے یہ اقدام کئے ہیں جبکہ سیاسی مبصرین کا خیال ہے کہ یہ سب کھیل محمد بن سلمان کی بادشاہت کی بساط کو بچھانے کے لئے کھیلا جارہا ہے۔
اور یہ بھی خبر موصول ہوئی ہے کہ سعودی حکومت نے خصوصی ائیرپورٹس کو بھی الرٹ کردیا ہے کہ کوئی شہزادہ یا وزیر ہماری اجازت کے بغیر ریاض سے نہ نکلنے پائے لہذا تمام پروازیں کینسل کردی جائیں۔

پارس ٹوڈے



آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Thursday - 2018 Nov 15