Friday - 2018 Nov 16
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 191871
Published : 1/2/2018 16:5

بحرین ایک جنگل راج ہے: حقوق بشر کے ماہر

واشنگٹن میں موجود حقوق بشر کے ماہر و فعال رکن مصطفٰی آخوند نے بحرین کے حالات پر تبصرہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ بحرین ایک جنگل راج ہے کہ جہاں قانون نام کی کوئی چڑیا نہیں رہتی۔

ولایت پورٹل: رپورٹ کے مطابق واشنگٹن میں موجود حقوق بشر کے ماہر و فعال رکن مصطفٰی آخوند نے بحرین کے حالات پر تبصرہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ بحرین ایک جنگل راج ہے کہ جہاں قانون نام کی کوئی چڑیا نہیں رہتی۔
بحرین میں امریکہ کے سابق سفیر جان کریاکوف  بحرین کے حالات پر تبصرہ کرتے ہوئے کہتے ہیں کہ: جبکہ بحرین کے شیعہ مسلمان بحرینی الاصل ہونے کے ساتھ ساتھ عربی زبان میں بات کرتے ہیں لیکن پھر بھی برسر اقتدار حکومت انھیں ایرانی حکومت کا حامی تصور کرتی ہے۔ حکومت کا یہ رویہ صحیح نہیں ہے۔
آخوند کا کہنا ہے کہ بحرینی حکومت اپنے شہریوں کو عدل فراہم نہیں کرپاتی لہذا وہ ان پر بے جا اتہامات لگا کر ان کے خلاف کاروئی کرتی ہے،چونکہ بحرینی حکومت کے پاس لوگوں پر اتہام لگانے کے لئے ایران سب سے بڑا بہانا ہے،اور اگر ایران بحرین میں مداخلت کرنا چاہتا تو یہ اس کے لئے بہت آسان تھا لیکن کسی ملک کے داخلی امور میں مداخلت کرنا ایران کے پروگرام کا حصہ ہی نہیں ہے۔

 



آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Friday - 2018 Nov 16