Wed - 2018 Nov 14
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 192647
Published : 16/3/2018 6:42

امریکہ کا افغانستان میں رہنے کا اصلی مقصد؛ روسی ایلچی کا انکشاف

کابل میں روسی صدر کے ایلچی کا کہنا ہے کہ افغانستان میں امریکی کردار نہایت منفی ہے اور ان کا اس ملک میں رہنے کا اصل مقصد روس، چین اور ایران سمیت خطے کی اہم طاقتوں پر نظر رکھنا ہے۔

11.jpg
ولایت پورٹل:افغانستان میں روسی صدر کے ایلچی «ضمیر کابلوف» کا کہنا ہے کہ افغانستان میں امریکی کردار نہایت منفی ہے اور ان کا اس ملک میں رہنے کا اصل مقصد روس، چین اور ایران  سمیت خطے کے دیگر ممالک پر اپنا اثر و رسوخ بڑھانا ہے،روسی صدر کے نمائندے نے مزید کہا کہ امریکا مرکزی ایشیاء کو غیر مستحکم کرنے کی کوشش کررہا ہے۔ افغانستان میں امریکی مقاصد وہ نہیں جو امریکہ کہتا ہے بلکہ امریکی حکام مرکزی ایشیا سمیت خطے کے ممالک پر اپنا اثر و رسوخ بڑھانے کے درپے ہیں،کابلوف کا کہنا ہے کہ امریکی حکام ابھی تک یہ سمجھنے سے قاصر ہیں کہ افغانستان کا سیاسی بحران فوجی ذرائع سے حل نہیں ہوگا اور طالبان کو فوجی طاقت کے ذریعہ شکست دینا ناممکن ہے،روسی ایلچی نے آئندہ انتخابات کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ ملک کی ابتر صورتحال کے پیش نظر افغان پارلیمان کے انتخابات بروقت ہوتے نظر نہیں آتے،کابلوف کا کہنا تھا کہ افغانستان میں پارلیمانی انتخابات کے لئے سب سے بڑا خطرہ داعشی دہشت گرد ہیں جو ملک کے مختلف صوبوں میں کافی حد تک مضبوط ہوچکے ہیں،واضح رہے کہ امریکہ سمیت دنیا کی طاقتور ترین افواج کئی سالوں سے افغانستان میں موجود ہیں لیکن اس ملک کا نصف حصہ اب بھی طالبان کے قبضے میں ہے، اس سے واضح ہوجاتا ہے کہ غیرملکی طاقتوں کی نظریں افغانستان کے بجائے کہیں اور ہیں ،سیاسی ماہرین کا کہنا ہے کہ امریکا نزدیک سے پاکستانی جوہری ہتھیاروں پر بھی نظر رکھنا چاہتا ہے۔
تسنیم





آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Wed - 2018 Nov 14