Wed - 2018 Sep 26
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 193523
Published : 1/5/2018 5:29

ہم دہشت گردی کے خلاف حتمی فتح کے بالکل قریب پہنچ چکے ہیں:شامی صدر

دہشت گردی کے خاتمے کے لئے شامی عوام اور فوج کے حوصلے بہت بلند ہوچکے ہیں۔

ولایت پورٹل:شام کے صدر بشار اسد نے کہا ہے کہ دشمن ملکوں نے اب نیابتی جنگ کے بجائے شام پر براہ راست حملے کا راستہ اپنالیا ہے،شام کے صدر بشار اسد نے دمشق میں ایران کی پارلیمنٹ میں قومی سلامتی اور خارجہ پالیسی کمیشن کے سربراہ علاء الدین بروجردی سے ملاقات میں کہا کہ دہشت گردوں کی شکست کے بعد ان کے حامیوں اور شام کے دشمن ملکوں نے شام پر براہ راست حملے کا راستہ اپنالیا ہے،انہوں نے اس بات پر زور دیا کہ دہشت گردوں کی شکست کے بعد دہشت گردی کے خاتمے کے لئے شامی عوام اور فوج کے حوصلے بہت بلند ہوچکے ہیں،شام کے صدر نے کہا کہ شامی فوج اور اس کے اتحادیوں نے دہشت گردی کا ڈٹ کر مقابلہ کیا ہے اور ہم اب حتمی فتح کے بالکل قریب پہنچ چکے ہیں،ایران کی پارلیمنٹ میں قومی سلامتی اور خارجہ پالیسی کمیشن کے سربراہ علاء الدین بروجردی نے بھی کہا کہ ایران کی حکومت اور عوام ہمیشہ شام کی حمایت کرتے رہیں گے،انہوں نے کہا کہ اسلامی جمہوریہ ایران شام میں سیاسی حل کے تلاش کی کوشش جاری رکھے گا اور وہ شام کی ارضی سالمیت اور اقتدار اعلی کی حمایت سے ایک قدم بھی پیچھے نہیں ہٹے گا،ایران کی پارلیمنٹ میں قومی سلامتی اور خارجہ پالیسی کمیشن کے سربراہ علاء الدین بروجردی شام سے متعلق علاقائی اور عالمی حالات کا جائزہ لینے کے لئے اتوار کو دمشق پہنچے ہیں۔
سحر





آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Wed - 2018 Sep 26