Sunday - 2019 January 20
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 193802
Published : 17/5/2018 4:46

ہمیں فلسطینیوں کو یقین دلانا ہوگا کہ برصغیر کے مسلمان آپ کے ساتھ ہیں:علامہ ساجد علی نقوی

برصغیر کے لوگ فلسطینیوں کی منشاءکےخلاف کسی بھی فیصلے کو قبول نہیں کریں گے۔
ولایت پورٹل:متحدہ مجلس عمل کے نائب صدراوراسلامی تحریک پاکستان کے سربراہ علامہ سید ساجد علی نقوی نے صیہونی دہشت گرد فورسز کی پر امن فلسطینیوں پر فائرنگ کی شدید الفاظ میں مذمت اور 60 افراد کی شہادت پر دکھ کا اظہار کرتے ہوئے کہاہے کہ اسرائیل ایک غاصب حکومت ہے اور فلسطینیوں کو حق ہے کہ وہ اپنی ریاست قائم کریں،پاکستان کی اسرائیل بارے پالیسی قائد اعظم محمد علی جناح کے افکار کےمطابق ہونی چاہیئے کہ پاکستان اور اسرائیل میں کوئی چیز مشترک نہیں اور نہ ہی ہو سکتی ہے اور برصغیر کے لوگ فلسطینیوں کی منشاءکے خلاف کسی بھی فیصلے کو قبول نہیں کریں گے، اور ہم مظلوم فلسطینیوں پر امریکہ کی کھلی پشت پناہی سے صیہونی ریاست کی جانب سے کی جانے والی وحشیانہ جارحیت کی بھی شدید الفاظ میں مذمت کرتے ہیں، امت مسلمہ کو مسائل کے حل کے لئے اتحاد کا مظاہرہ کرنا ہوگا، حکومت پاکستان مسئلہ فلسطین کے حل کے لئے سفارتی کوششوں کو مزید تیز کرتے ہوئے پرامن شہریوں کے قتل عام کا معاملہ اقوام متحدہ میں اٹھائے،علامہ ساجد نقوی کا کہنا تھا کہ قائد اعظم محمد علی جناح نے امریکی صدر کو لکھے گئے خط میں واضح طور پر کہاتھاکہ برصغیر کے لوگ فلسطینیوں کی منشاءکےخلاف کسی بھی فیصلے کو قبول نہیں کریں گے،انہوں نے کہاکہ ہم خاموش نہیں رہ سکتے ہمیں فلسطینیوں کو یہ یقین دلانا ہوگا کہ برصغیر میں بسنے والے مسلمان آپ کے ساتھ ہیں،انہوں نے کہا کہ پاکستانی عوام بھی اسی نظریہ کے حامل ہیں کہ اسرائیل ایک غاصب اور غیر قانونی حکومت ہے اور پاکستان ایک نظریاتی اور قانونی حکومت ہے اس لئے ان کے درمیان کوئی چیز مشترک نہیں ہو سکتی،انہوں نے مزید کہاکہ امت مسلمہ کے تمام ممالک اپنے آپسی اختلافات کو فراموش کرتے ہوئے اسرائیل کی سفاکیت کےخلاف متحد ہو جائیں اور ایک ایسا مضبوط لائحہ عمل تیار کریں جس سے فلسطینیوں کو آئے روز اس منظم صیہونی دہشتگردی سے نجات مل سکے۔
تسنیم





آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Sunday - 2019 January 20