Monday - 2019 January 21
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 193938
Published : 24/5/2018 13:15

اس بار کون بنے گا لبنان کا نیا وزیر اعظم؟؟؟

یہ بات بھی قابل غور ہے کہ سعد حریری کی فیملی کے سعودی کے شاہی خاندان سے گہرے روابط ہیں اس طرح کہ وہ جب کہیں حریری اپنے منصب سے دستبردار ہوسکتے ہیں لہذا یہ دیکھتے ہوئے ایسا لگ رہا ہے کہ لبنان میں الیکشن تو ضرور ہوئے ہیں لیکن سیاسی بساط پر انہیں مہروں کا رہنا کسی خاص تبدیلی اور ترقی کی نوید نہیں بن سکتی۔
ولایت پورٹل: رپورٹ کے مطابق لبنان کے صدر’’مشل عون‘‘ ایک بار پھر سعد حریری کا نام لبنان کے وزیر اعظم کے طور پر پیش کرسکتے ہیں۔
وزارت عظمٰی کا یہ منصب لبنان میں معاہدہ طائف کے بعد سے اب تک اہل سنت برادری سے مخصوص ہے اور یہاں کا صدر ایک عیسائی اور اسپیکر شیعہ برادری سے  ہی منتخب ہوسکتا ہے۔
یاد رہے کہ لبنان پارلیمنٹ کی ۱۲۸ سیٹوں میں سے حزب اللہ اور اس کے اتحاد کے پاس ۶۸ نشستیں ہیں لیکن لبنان کا یہ پیچیدہ سیاسی ڈھانچہ ایک ہارے ہوئے کنڈیڈیٹ کو وزیر اعظم بنانے پر تو رضا مند ہے لیکن کسی جتنے والے شیعہ کو نہیں۔
یہ بات بھی قابل غور ہے کہ سعد حریری کی فیملی کے سعودی کے شاہی خاندان سے گہرے روابط ہیں اس طرح کہ وہ جب کہیں حریری اپنے منصب سے دستبردار ہوسکتے ہیں لہذا یہ دیکھتے ہوئے ایسا لگ رہا ہے کہ لبنان میں الیکشن تو ضرور ہوئے ہیں لیکن سیاسی بساط پر انہیں مہروں کا رہنا کسی خاص تبدیلی اور ترقی کی نوید نہیں بن سکتی۔



آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Monday - 2019 January 21