Monday - 2018 Dec 17
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 195770
Published : 14/10/2018 8:32

شمالی افغانستان کے شہر خوشامد پر طالبان کا قبضہ

صوبہ پکتیا کے شہر خوشامد کے تمام چک پوسٹوں پر طالبان کا قبضہ ہوچکا ہے۔

ولایت پورٹل:طالبان کے مسلح افراد نے صوبہ پکتیا کے اہم شہر خوشامد پر قبضہ کرکے افغان سکیورٹی فورسزکو سخت مالی اورجانی نقصان پہنچایاہے،طالبان کے ترجمان ذبیح اللہ مجاہد کا کہنا ہے کہ صوبہ پکتیا کے شہر خوشامد کے تمام چک پوسٹوں پر طالبان کا قبضہ ہوچکا ہے،بیان کے مطابق طالبان کے حملے میں شہر کے پولیس کماڈر سمیت 10 اہلکار مارے گئے ہیں جبکہ چھے شدید زخمی ہیں 6اہلکاروں کا طالبان نے زندہ گرفتار کرلیا ہے،ذبیح اللہ مجاہد کا کہنا ہے کہ افغان فورسز کے ساتھ جھڑپوں میں 2طالبان جنگجو بھی مارے گئے اور 4 زخمی ہیں،واضح رہے کہ افغانستان میں پارلیمانی انتخابات قریب آتے ہی طالبان کے حملوں میں شدید اضافہ دیکھنے میں آیا ہے،20اکتوبر کو ہونے والے انتخابات میں ڈھائی ہزار سے زائد امیدوار حصہ لیں گے لیکن انتخابات کے قریب آتے ہی ہر گزرتے دن کے ساتھ پرتشدد واقعات کا خطرہ بڑھتا جا رہا ہے،آئندہ سال ہونے والے صدارتی انتخاب سے قبل یہ پارلیمانی انتخابات ایک بہت بڑا امتحان ہیں اور گزشتہ چند ماہ کے دوران ہونے والے حملوں کے بعد یہ بحث بھی جنم لے چکی ہے کہ ایسی صورتحال میں انتخابات ہونے چاہیے یا نہیں،افغانستان میں پارلیمانی انتخابات کے قریب آتے ہی طالبان نے حملے تیز کردیے ہیں اور ساتھ افغان عوام پر زور دیا ہے کہ وہ پارلیمانی انتخابات کا بائیکاٹ کریں،طالبان نے کہا ہے کہ 'اماراتِ اسلامیہ' اپنے تمام مجاہدین کو حکم دیتی ہے کہ وہ امریکا کی قیادت میں ملک بھر میں ہونے والے انتخابی عمل کی راہ میں رکاوٹیں ڈال کر اسے روکیں،افغانستان میں طالبان نے رواں ماہ ہونے والے انتخابات کو "جعلی" اور "مکمل طور پر بوگس" قرار دیتے ہوئے انتخابی عمل کے دوران حملوں کی دھمکی دی ہے۔
تسنیم



آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Monday - 2018 Dec 17