Thursday - 2018 Oct. 18
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 71908
Published : 25/3/2015 21:23

فلسطین: ڈاکٹروں کی جانب سےقیدیوں کو ایذا رسانی

فلسطینی قیدیوں کے بارے میں تحقیقات کرنے والے مرکز کے ترجمان ریاض الاشقر نے کہا ہے کہ صیہونی ڈاکٹر، فلسطینی قیدیوں کے مسائل اور ایذا رسانی میں پورا کردار ادا کررہے ہیں- اطلاعات کے مطابق‎ ریاض الاشقر نے بدھ کے روز انکشاف کیا کہ صیہونی حکومت کی جیلوں میں قیدیوں کے علاج معالجے پر مامور طبی عملہ، اپنے پیشے اور اخلاقی اقدار کو پیروں تلے روندتے ہوئے بیمار فلسطینی قیدیوں کو جسمانی اور نفسیاتی تکلیفیں پہنچانے میں کسی بھی اقدام سے گریز نہیں کرتا۔ بیان کے مطابق صیہونی ڈاکٹر فلسطینی قیدیوں کے خلاف ہر طرح کے جرائم کا ارتکاب کررہے ہیں۔ ریاض الاشقر نے کہا ہے کہ صیہونی ڈاکٹر، جو بیمار فلسطینی قیدیوں کا معائنہ کرتے ہیں، ان فلسطینیوں کی خطرناک بیماریوں سے آگاہ ہونے اور یہ جاننے کے باوجود کہ انھیں فوری طور پر علاج یا آپریشن کی ضرورت ہے، غلط بیانی سے کام لیتے ہیں۔ فلسطینی قیدیوں کے بارے میں تحقیقات کرنے والے مرکز کے ترجمان نے صیہونی حکومت کی عوفر فوجی عدالت میں صیہونی ڈاکٹروں کی جانب سے پیش کی جانے والی رپورٹوں کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ ایک بیمار فلسطینی قیدی، ابراہیم الجمال کے بارے میں پیش کی جانے والی ایک رپورٹ میں مذکورہ قیدی مکمل طور سے صحت مند قرار دیا گیا ہے، جس کی بناپر اس کی رہائی کو التوا میں ڈال دیا گیا ہے۔ ریاض الاشقر نے عالمی ادارہ صحت اور انسان دوستانہ تنظیموں سے درخواست کی ہے کہ وہ، ابراہیم الجمال سمیت تمام بیمار فلسطینی قیدیوں کے مصائـب و مشکلات ختم اور ان کی غیر مشروط رہائی کی راہ ہموار کریں۔


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Thursday - 2018 Oct. 18