Saturday - 2018 August 18
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 71920
Published : 26/3/2015 19:20

تکریت میں داعش کے خلاف فوجی کاروائی

عراق کے شہر تکریت میں داعش دہشتگردوں کے خلاف فوجی کاروائی پھر شروع ہوگئی ہے- عراقی فوجیوں نے تکریت میں داعش دہشتگردوں کے ٹھکانوں پر حملہ کرکے دو ہفتےکے وقفے کے بعد داعش کے خلاف اپنی کاروائی دوبارہ شروع کردی ہے- صوبہ صلاح الدین کی صوبائی کونسل کے رکن ہادی الخزراجی نے کہا ہے کہ تکریت میں عراقی فوجیوں کی یہ کاروائی، بدھ اور جمعرات کی درمیانی رات نو بجے شروع ہوئی ہے جس کے دوران داعش دہشتگرد گروہ کے ٹھکانوں پر توپوں اور مارٹرگولوں اور کاتیوشا راکٹوں سے شدید حملہ کیا گیا- عراق کے دو فوجی افسروں نے بھی اس خبر کی تصدیق کی ہے کہ داعش دہشتگرد گروہ کے ٹھکانوں پر شدید گولہ باری کی جارہی ہے- دوسری جانب موصل کے جنوب مشرق میں واقع علاقے مخمور میں کرد پیشمرگہ ملیشا کے کمانڈر سیروان البارزانی نےکہا ہےکہ داعش نے مخمور کے مضافات میں دو علاقوں پرحملہ کیا جسے کرد پیشمرگہ ملیشیا نے پسپا کردیا- سیروان البارزانی کے مطابق اس حملے میں داعش کو سخت ہزیمت اٹھانی پڑی ہے - عراق کے ایک سیکورٹی ذریعے کا کہنا ہے کہ موصل کے شمال میں واقع علاقے ناوران میں بھی داعش کے ٹھکانوں پر بمباری کی گئی ہے-


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Saturday - 2018 August 18