Friday - 2018 july 20
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 73163
Published : 18/4/2015 21:35

جنگ یمن، امریکی منصوبوں کی ناکامی کا شاخسانہ

سپاہ پاسداران انقلاب اسلامی کے ڈپٹی کمانڈر نے کہا ہے کہ یمن میں جو کچھ پیش آرہا ہے، وہ علاقے میں امریکی منصوبوں کی ناکامی کا نتیجہ ہے-
سپاہ پاسداران انقلاب اسلامی کے ڈپٹی کمانڈر جنرل حسین سلامی نے المیادین ٹی وی چینل سے گفتگو میں کہا ہے کہ یمن پر سعودی عرب کی جارحیت کا مقصد، سعودی عرب کے اندرونی مسائل کی پردہ پوشی کرنا ہے- انھوں نے اس جانب اشارہ کرتے ہوئے کہ سعودی عرب کی فوج، ایک روایتی فوج ہے جسے کوئی خاص مہارت حاصل نہیں ہے اور وہ، یمن کے خلاف جنگ شروع کرکے ایک دلدل میں پھنس گئی ہے، کہا کہ یمن کی جنگ ایک ایسی جنگ ہے جو پورے علاقے کو بدامنی سے دوچار کردے گی- انھوں نے کہا کہ یمن میں آل سعود حکومت کی جارحیت کا مقابلہ کرنے کےلئے سارے آپشن موجود ہیں اس لئے کہ عوامی انقلابی تحریک انصاراللہ، دور مار میزائیلوں سے مسلح ہے، علاوہ ازیں انصاراللہ کے پاس اس بات کی توانائی موجود ہے کہ وہ سعودی عرب کے علاقوں میں تیزی کے ساتھ پہنچ جائے- جنرل حسین سلامی نے یمنی عوام کے خلاف سلامتی کونسل کے حالیہ قرارداد کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ سلامتی کونسل، کمزوروں کے مقابلے میں طاقتور ملکوں کی حمایت کرتی ہے- انھوں نے ایران کے دفاعی میزائیلی نظام کے حوالے سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ایران، بین الاقوامی معائنہ کاروں کو اپنے دفاعی مراکز کا معائنہ کرنے کی ہرگز اجازت نہیں دے گا-


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Friday - 2018 july 20