Friday - 2018 Nov 16
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 73954
Published : 2/5/2015 5:31

صیہونیوں کا آپریشن پروٹیکٹو ایج آپریشن کی ناکامی کا اعتراف

صیہونی حکومت نے اس بات کا اعتراف کرلیا ہے کہ گزشتہ موسم گرما کے دوران اس کو غزہ پٹی پر اپنے حملے کے اہداف کے حصول میں ناکامی کا منہ دیکھنا پڑا ہے- المنار ٹی وی چینل کی رپورٹ کے مطابق غزہ پٹی کےخلاف آپریشن کے نو ماہ کے بعد اسرائیل کے اپنے جائزوں کے مطابق تل ابیب کو فلسطینیوں کی فوجی صلاحیتوں کو مکمل طور پر ختم کرنے، خصوصا ٹنلز کی تعمیر اور میزائیلی صلاحیت کی تقویت کی روک تھام کے سلسلے میں ناکامی ہوئی ہے- ان جائزوں کی وجہ سے مقبوضہ فلسطین میں سیاسی اور عوامی سطح پر بہت سے سوالات اٹھ کھڑے ہوئے ہیں- یہ ایسی حالت میں ہے کہ جب، غزہ پٹی کے مضافات میں واقع صیہونی بستیوں میں خوف و ہراس پایا جاتا ہے- صیہونی حکومت کی پارلیمنٹ کے رکن، حاییم لوین نے کہا ہے کہ پروٹیکٹو ایج آپریشن فلسطینیوں کو ہتھیار ڈالنے پر مجبور نہیں کر سکا ہے۔ حاییم لوین نے مزید کہا کہ اس میں کوئی شک نہیں کہ غزہ کی پٹی کے پچاس فیصد فلسطینی، اسلحہ اور ٹنلز کی کھدائی میں مصروف ہیں- اس رپورٹ میں آیا ہے کہ صیہونی حکومت کا، اپنی ناکامی پر مبنی اعتراف، ٹنلز اور میزائیلی صلاحیت تک محدود نہیں ہے بلکہ اسرائیلی حلقوں نے تحریک حماس کی فوجی شاخ، عزالدین قسام بریگیڈ کے کمانڈر محمد الضیف کی ٹارگٹ کلنگ میں اپنی ناکامی کا اعتراف بھی کیا ہے-


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Friday - 2018 Nov 16