Monday - 2018 Dec 10
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 75009
Published : 22/5/2015 21:10

الرمادی کے سقوط کی تحقیقات کریں گے

عراق کے وزیر اعظم نےکہا ہے کہ الرمادی کے سقوط کرجانے کی وجوہات کا مکمل طور پر جائزہ لیا جائے گا- عراق کے وزیر اعظم حیدر العبادی نے صوبہ الانبار کے شہر الرمادی کے بعض علاقوں پر داعش دہشتگردوں کا قبضہ ہوجانے کی وجوہات کا پتہ لگائے کی ہدایات جاری کردی ہیں- انھوں نے الرمادی کے سقوط کرجانے کی وجوہات کا مکمل طور پر جائزہ لئے جانے کی ضرورت پر زور دیا ہے- عراق کے وزیر اعظم حیدر العبادی نے کہا ہے کہ الرمادی کے سقوط کرجانے کے ذمہ دار فوجی کمانڈروں کے خلاف فوجی عدالتوں میں کاروائی کی جائے گی- دوسری جانب صوبہ الانبار کی گورننگ کونسل کے رکن فرحان محمد نے کہا ہے کہ الرمادی سے دہشتگردوں کا قبضہ ختم کرنے کے لئے چھے ہزار عوامی رضاکار تعینات ہوگئے ہیں- یہ عوامی رضاکار الرمادی کے مختلف مشرقی علاقوں منجملہ ثرثار، نخیب اور مشرقی حصیبہ میں تعینات ہوئے ہیں- فرحان محمد نے کہا ہے کہ الرمادی کے سقوط کر جانے کے بعد اس علاقے میں آباد مختلف قبائل، عراقی فوج اور عوامی رضاکاروں کی ہم آہنگی اور الانبار میں محصور گھرانوں کی حمایت میں اپنا گھر بار چھوڑ کر چلے گئے ہیں تاکہ جنگ کے نتیجے میں عام شہریوں کو زیادہ نقصان نہ پہنچے- داعش دہشتگردوں نے وحشیانہ جارحیت کا مظاہرہ کرتے ہوئے الرمادی کے بعض علاقوں پر قبضہ کرلیا ہے- صوبہ الانبار کی کونسل نے اتوار کے روز اپنے ہنگامی اجلاس میں الرمادی کی ابتر صورت حال کے پیش نظر عوامی رضاکاروں سے داعش کے خلاف جنگ میں شمولیت کی اپیل کی ہے-


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Monday - 2018 Dec 10