Thursday - 2018 August 16
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 76906
Published : 12/6/2015 21:3

شام: چالیس عام شہری دہشتگردوں کے ہاتھوں قتل

شام میں سرگرم دہشت گرد گروہ جبہۃ النصرہ نے چالیس عام شہریوں کو قتل کر دیا۔ لبنانی ذرائع ابلاغ نے خبر دی ہے کہ جبہۃ النصرہ دہشت گردوں نے ادلب شہر میں چالیس دروزی شہریوں کو اس لئے قتل کر دیا کہ انہوں نے دہشت گردوں کے ساتھ تعاون کرنے سے انکار کر دیا تھا۔ النصرہ دہشت گرد گروہ نے ادلب شہر کے باشندوں کی رفت و آمد پر پابندی عائد کر دی ہے۔ دہشت گرد ادلب شہر کے متعدد تاریخی کلیساؤں کو بھی تباہ کر رہے ہیں۔ جبہۃ النصرہ دہشت گرد گروہ کے وحشیانہ اقدامات کے باوجود مغربی ممالک، ترکی اور سعودی عرب ان کی حمایت کر رہے ہیں۔ بعض مغربی ممالک نے جبہۃ النصرہ گروہ کو تسلیم کرتے ہوئے اس گروہ میں شمولیت اختیار کرنے والے دہشت گردوں کو ٹریننگ دینے کی ذمہ داری بھی سنبھال لی ہے۔ المیادین ٹی وی نے ایسی دستاویزات کا انکشاف کیا ہے جن سے پتہ چلتا ہے کہ امریکہ، سعودی عرب اور اردن کی خفیہ ایجنسیوں نے شام کے جنوب میں واقع ایک فوجی مرکز پر حملے کے لئے پچپن مسلح دہشت گرد گروہوں کو ٹریننگ دی ہے۔ اس فوجی مرکز کا شمار شام کے اہم ترین مراکز میں ہوتا ہے۔ دوسری جانب شام کی مسلح افواج اور عوامی فورس نے القلمون کے علاقے بلوکست کی اسٹریٹجک پہاڑیوں کو مکمل طور پر آزاد کرالیا ہے۔ شامی فوج نے شام کے وادی الاحمر کے علاقے راس الکوش اور القدومی صحرا سے دہشت گردوں کا صفایا بھی کر دیا۔ شامی فوج نے دہشت گرد گروہ جبہۃ النصرہ کی تین مسلح گاڑیوں کو بھی تباہ کر دیا۔


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Thursday - 2018 August 16