Wed - 2019 January 23
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 76997
Published : 14/6/2015 19:51

بحرین: آل خلیفہ کے کارندوں کا پرامن مظاہرین پر حملہ

آل خلیفہ حکومت نے ایک بار پھر بحرینی عوام کے مظاہروں کو کچلنے کے لئے ان پر حملہ کر دیا۔
مرآت البحرین ویب سائٹ کی رپورٹ کے مطابق آل خلیفہ حکومت کے کارندوں نے ایک بار پھر بحرین کے الدراز، المصلی، ابوصبیع، کرانہ، مقابہ، کرزگان، المالکیہ اور الدیر علاقوں میں مظاہرین پر حملہ کرکے مظاہروں کو سرکوب کردیا- یہ مظاہرے بحرین کی جمعیت وفاق ملی کے سربراہ شیخ علی سلمان کی آل خلیفہ کے ہاتھوں گرفتاری اور مقدمہ چلائے جانے کے خلاف کئے گئے۔ دوسری جانب بحرین کی معاشی ترقی کونسل نے، کہ جس کے سربراہ اس ملک کے ولیعہد سلمان بن حمد آل خلیفہ ہیں، دوہزار پندرہ اور دوہزار سولہ کے مالی بجٹ میں، لاکھوں ڈالر "مکمل اور ہمہ گیر میڈیا اسٹریٹجی" سے موسوم پروگرام سے مختص کیے ہیں۔ آل خلیفہ حکومت نے بجٹ کا خطیر حصہ ایسی حالت میں عالمی رائے عامہ کو منحرف کرنے کے مقصد سے مختص کیا ہے کہ اس وقت اس ملک کو شدید مالی بحران کا سامنا ہے- آل خلیفہ حکومت نے،دوہزار پندرہ کے آغاز سے بین الاقوامی انتباہات پر توجہ دیئے بغیر بحرین میں مخالفین اور سرگرم سیاسی کارکنوں کی سرکوبی کا عمل تیز تر کردیا ہے- واضح رہے کہ چودہ فروری دوہزار گیارہ سے بحرینی عوام، آل خلیفہ حکومت کے خلاف سراپا احتجاج ہیں اور وہ ملک میں آزادی، عدل و انصاف کے قیام ، امتیازی سلوک کے خاتمے نیز ایک منتخب حکومت کے قیام کا مطالبہ کر رہے ہیں۔


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Wed - 2019 January 23