Tuesday - 2018 july 17
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 80560
Published : 11/8/2015 21:35

وزیر خارجہ کے علاقائی ممالک کے دورے کا دوسرا مرحلہ

اسلامی جمہوریہ ایران کی وزارت خارجہ کی ترجمان نے کہا ہے کہ وزیر خارجہ کے علاقائی ممالک کے دورے کا دوسرا مرحلہ، منگل کو، بیروت کے دورے سے شروع ہو رہا ہے-

ایرانی وزارت خارجہ کی ترجمان مرضیہ افخم نے منگل کے دن ارنا سے گفتگو کرتے ہوئے ہوئے کہا کہ وزیر خارجہ محمد جواد ظریف اپنے دورہ بیروت میں لبنانی حکام کے ساتھ علاقائی حالات، دوجانبہ مسائل اور دہشت گردی و انتہا پسندی کے بحران کے بارے میں بات چیت کریں گے- مرضیہ افخم نے کہا کہ بحران شام کے حل کے سلسلے میں ایران کے نئے منصوبے اور ایٹمی مذاکرات کے نتائج و اثرات کے بارے میں بھی وزیر خارجہ کے دورہ بیروت میں تبادلہ خیال ہو گا- انہوں نے بحران شام کے حل کے لئے ایران کے موقف کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ بحران شام کے بارے میں اسلامی جمہوریہ ایران کی پالیسی شروع سے ہی تین منطقی اصولوں پر استوار رہی ہے، یہ تین اصول اپنی سرنوشت اور تقدیر کے فیصلے اور اصلاح کے لئے ملت شام کے جائز حق کا احترام، اغیار کی مداخلت کی مخالفت، جو حکومت شام کی آزاد و غیرجانبدار پالیسیوں اور استقامت کی حمایت کی وجہ سے شام کے خلاف اقدامات کرکے اپنے خاص اہداف حاصل کرنا چاہتے ہیں، اور سیاسی اہداف کے حصول کے لئے دہشت گردی کے استعمال کی مخالفت پر مبنی ہیں- ایرانی وزارت خارجہ کی ترجمان نے کہا کہ بحران شام کے حل میں مدد کے سلسلے میں چار شقوں پر مشتمل ایرانی منصوبے کو نئی شکل دے کر تیار کیا جا رہا ہے جسے حکومت شام اور دیگر مؤثر ممالک کے حکام سے صلاح و مشورے کے بعد پیش کیا جائے گا- مرضیہ افخم نے کہا کہ بحران شام کے آغاز سے ہی اسلامی جمہوریہ ایران کا موقف یہ تھا کہ اس بحران کا حل فوجی نہیں ہے بلکہ اس بحران کو مذاکرات اور مفاہمیت کی بنیاد پر سیاسی و سفارتی طریقے سے حل کیا جانا چاہئے-

 


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Tuesday - 2018 july 17