Tuesday - 2018 july 17
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 80579
Published : 12/8/2015 11:20

شہید فلسطینی بچے کی ماں کی شہادت کی تردید

فلسطینی انتظامیہ کے وزیر صحت نے جلا کر شہید کئے گئے فلسطینی شیر خوار بچے کی ماں کی شہادت کی تردید کی ہے-

اطلاعات کے مطابق فلسطینی انتظامیہ کے وزیر صحت جواد عواد نے منگل کے روز کہا کہ انتہا پسند صیہونی آبادکاروں کے ہاتھوں جلا کر شہید کئے گئے فلسطینی شیر خوار بچے علی دوابشہ کی ماں رہام دوابشہ کی شہادت کی خبر صحیح نہیں ہے- فلسطینی وزارت صحت کے ترجمان اسامہ النجار نے بھی اس بات کا ذکر کرتے ہوئے کہ جلا کر شہید کئے گئے فلسطینی شیر خوار بچے کی ماں رہام دوابشہ کی حالت تشویشناک ہے، کہا کہ رہام دوابشہ اسپتال میں انتہائی نگہداشت والے شعبے یا آئی سی یو میں داخل ہیں- قابل ذکر ہے کہ بعض ذرائع ابلاغ نے منگل کی صبح اعلان کیا تھا کہ محترمہ رہام دوابشہ، جو تقریبا" دس دن پہلے انتہا پسند صیہونی آبادکاروں کے آتشیں مواد کے حملے میں نوے فی صد جل گئی تھیں، پیر کی رات زخموی کی تاب نہ لاتے ہوئے شہید ہو گئی ہیں- واضح رہے کہ انتہا پسند صیہونی آبادکاروں کے حملے میں دوابشہ خاندان کے گھر میں آگ لگ گئی تھی جس کے نتیجے میں شیر خوار بچہ علی دوابشہ جل کر شہید ہو گیا تھا اور علی دوابشہ کے والد سعد دوابشہ بھی ہفتے کے روز زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے شہید ہو گئے تھے- قابل ذکر ہے کہ غرب اردن کے شہر دوما میں واقع سینتیس سالہ فلسطینی سعد دوابشہ کے گھر میں صیہونیوں کے حملے کے بعد آگ لگنے کی وجہ سے علی دوابشہ اسی دن شہید ہو گیا تھا اور اس کے بھائی سمیت گھر کے باقی تمام افراد شدید زخمی ہو گئے تھے-

 


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Tuesday - 2018 july 17