Saturday - 2018 August 18
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 83593
Published : 17/9/2015 9:6

ایران میں کئی ممالک کے سفیروں کا گنبد کاووس شہر کا دورہ

مختلف ممالک کے سفیروں نے ایران کے شمال مشرقی شہر گنبد کاووس کا دورہ کیا ہے جہاں تاریخی قابوس ٹاور واقع ہے- ارنا کی رپورٹ کے مطابق ایران کے صوبہ گلستان میں مختلف ایرانی اقوام کا ثقافتی فیسٹول مںگل کے دن سے شروع ہوا اور تہران میں متعین پاکستان، ازبکستان، تاجکستان، قرقیزستان، افغانستان، عراق اور ہندوستان کے سفیروں نے، جو اس فیسٹول کو دیکھنے کے لئے صوبہ گلستان کے دورے پر ہیں، بدھ کے روز تاریخی قابوس ٹاور اور کارپٹ میوزیم دیکھنے کے لئے گنبد کاووس شہر کا دورہ کیا- پاکستان کے سفیر نور محمد جدمانی نے اس موقع پر نامہ نگاروں سے گفتگو کے دوران ایرانیوں کو مہمان نواز اور محبت کے ساتھ پیش آنے والے لوگ بتایا اور کہا کہ ایرانی تمام دیگر ممالک کے لوگوں کے ساتھ محبت اور خلوص سے پیش آتے ہیں- انہوں نے ایران اور پاکستان کے ثقافتی اشتراکات کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ ایرانی عوام دنیا کے دیگر ممالک کے عوام کے ساتھ بھی وہی محبت و خلوص والا رویہ اختیار کرتے ہیں کہ جو رویہ وہ ثقافتی قربت کے حامل ہمسایہ ممالک کے عوام کے ساتھ اختیار کرتے ہیں- افغانستان کے سفیر نصیر احمد نور نے قابوس ٹاور کو ایک اعلی اور بے نظیر عمارت قرار دیا اور مہمان نوازی کو ایرانی عوام کی اہم صفت سے تعبیر کیا- باسٹھ اعشاریہ چھے چھے میٹر اونچی عمارت قابوس ٹاور اینٹوں سے بنی ہوئی دنیا کی سب سے اونچی عمارت شمار ہوتی ہے اور عالمی ورثے کی فہرست میں بھی اس کا اندراج ہو چکا ہے- اس ٹاور کی تعمیر ایک ہزار چھے اور سات عیسوی میں ہوئی تھی- گنبد کاووس شہر میں منعقد ہونے والا ایرانی اقوام کا ثقافتی فیسٹول جمعے تک جاری رہے گا-


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Saturday - 2018 August 18