Saturday - 2018 June 23
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 83911
Published : 22/9/2015 9:41

پارچین سائٹ سے نمونے حاصل کیا جانا نقشہ راہ کے مطابق ہے : علی اکبر صالحی

اسلامی جمہوریہ ایران کے ایٹمی توانائی کے ادارے کے سربراہ علی اکبر صالحی نے پارچین سائٹ سے نمونے لئے جانے کو آئی اے ای اے کے ساتھ تعاون کے نقشہ راہ کا حصہ قرار دیا ہے-
ایران کے ایٹمی توانائی کے ادارے کے سربراہ علی اکبر صالحی نے ہمارے نمائندے سے گفتگو کرتے ہوئے ایرانی ماہرین کے ہاتھوں پارچین سائٹ کے نمونے لئے جانے پر مبنی پیر کی شام کو دیئے گئے ایٹمی توانائی کی بین الاقوامی ایجنسی، آئی اے ای اے، کے ڈائریکٹر جنرل یوکیا امانو کے بیان کے بارے میں کہا کہ یہ کام نقشہ راہ کے دائرے میں انجام دیا گیا ہے-

انہوں نے کہا کہ اسلامی جمہوریہ ایران اور آئی اے ای اے اب تک دو طرفہ وعدوں پر عمل پیرا رہے ہیں- علی اکبر صالحی نے کہا کہ ایران اور آئی اے ای اے نے ویانا میں گزشتہ جولائی میں ایک معاہدے پر دستخط کئے تھے جس میں نقشہ راہ بھی شامل تھا اور اس کے مطابق فریقین ایران کے ایٹمی پروگرام سے متعلق باقی ماندہ مسائل کے بارے میں اقدامات انجام دینے کے پابند ہیں-

ان کا کہنا تھا کہ آئی اے ای اے کے ڈائریکٹر جنرل نے پیر کی شام کو آئی اے ای اے کے بورڈ آف گورنرز کے ارکان کو مثبت رپورٹ پیش کی ہے اور اپنے دورہ ایران پر اطمینان کا اظہار کیا ہے-

ایران کے ایٹمی توانائی کے ادارے کے سربراہ نے کہا کہ ایران نے اپنے مفادات اور قومی تقاضوں کے مطابق عمل کیا ہے اور یہ وعدہ کیا گیا ہے کہ ایران کا ایٹمی معاملہ آئندہ پندرہ دسمبر تک ختم اور آئی اے ای اے کے ایجنڈے سے نکل جائے گا-

قابل ذکر ہے کہ آئی اے ای اے کے ڈائریکٹر جنرل یوکیا امانو نے اپنے دورہ ایران سے متعلق رپورٹ میں کہا ہے کہ آئی اے ای اے پارچین سائٹ سے ایرانی ماہرین کے ہاتھوں نمونے حاصل کئے جانے کی تصدیق کرتی ہے-


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Saturday - 2018 June 23