Saturday - 2018 June 23
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 83938
Published : 23/9/2015 9:13

چابہار ٹرانزٹ کوریڈور کی تعمیر کے لیے ایران، افغانستان اور ہندوستان کا اتفاق رائے

اسلامی جمہوریہ ایران کے ٹرانزٹ اور سرحدی ٹرمینلز کے ادارے کے ڈائریکٹر جنرل نے چابہار ٹرانزٹ کوریڈور کی تعمیر کے لیے ایران افغانستان اور ہندوستان کے درمیان اتفاق رائے کی خبر دی ہے-
ہمارے نمائندے کی رپورٹ کے مطابق ایران کے ٹرانزٹ اور سرحدی ٹرمینلز کے ادارے کے ڈائریکٹر جنرل محمد جواد عطرچیان نے کہا ہے کہ ماہرین کی سطح پر کام مکمل ہونے کے بعد تینوں ملکوں کے صدور چابہار ٹرانزٹ کوریڈور کی تعمیر کے سمجھوتے پر دستخط کریں گے- محمد جواد عطرچیان نے کہا کہ چابہار کوریڈور سمجھوتہ صوبہ سیستان و بلوچستان کی اقتصادی اور سماجی ترقی، اس صوبے میں روزگار کے مواقع پیدا کرنے اور چاہہار کے اقتصادی علاقے کی آمدنی میں اضافے میں اہم کردار ادا کرے گا- انھوں نے اس بات پر زور دیا کہ تینوں ملکوں کو اس بات کا پابند کیا گیا ہے کہ وہ چابہار کوریڈور منصوبے کو کامیاب بنانے کے لیے نقل و حمل اور ٹرانسپورٹ کے شعبے میں اپنی بنیادی تنصیبات کو ترقی دیں- انھوں نے مزید کہا کہ اس سمجھوتے پر دستخط ہونے اور چابہار کوریڈور کی تعمیر سے افغانستان اور ہندوستان کی اشیا شہید رجائی بندرگاہ سے چابہار بندرگاہ آئیں گی اور یہ بندرگاہ زیادہ سے زیادہ فعال ہو جائے گی- اسلامی جمہوریہ ایران، افغانستان اور ہندوستان کے درمیان بین الاقوامی نقل و حمل اور ٹرانزٹ کوریڈور کے قیام کے سلسلے میں ماہرین کی سطح کا پہلا دو روزہ اجلاس پیر سے ایران کے ٹرانزٹ اور روڈ ٹرانسپورٹ کے ادارے میں شروع ہوا-


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Saturday - 2018 June 23