Sunday - 2018 july 22
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 84220
Published : 29/9/2015 9:46

سعودی وزیروں اور عہدیداروں کی برطرفی کافی نہیں، قانونی کارروائی کی جائے، ایران

ایران کے وزیرداخلہ نے سانحہ منٰی کے ذمہ دار بعض سعودی افسران کی برطرفی کو ناکافی قرار دیتے ہوئے قانونی چارہ جوئی کا مطالبہ کیا ہے۔
تہران میں سانحہ منٰی کے بارے میں تازہ ترین صورتحال سے متعلق صحافیوں سے بات چیت کرتے ہوئے ایران کے وزیر داخلہ عبدالرضا رحمانی فضلی نے کہا کہ بعض سعودی وزیروں اور افسروں کی محض برطرفی کافی نہیں۔
انہوں نے کہا کہ تہران کو امید ہے کہ سعودی حکومت سانحہ منی کے ذمہ داروں کا تعین اور انہیں قرار واقعی سزا دے گی۔ 
ایران کے وزیر داخلہ نے کہا کہ بعض خبروں کے مطابق کچھ ملکوں نے سعودی حکام کے ساتھ اس بات پر اتفاق کرلیا ہے کہ سانحہ منٰی میں مرنے والوں کو سعودی عرب میں دفن کردیا جائے لیکن اسلامی جمہوریہ ایران ایسا نہیں چاہتا۔ انہوں نے کہا کہ ایران اپنے حاجیوں کی میتوں اور زخمیوں کی واپسی اور لاپتہ افراد کی تلاش کا کام جاری رکھے گا اور سعودی حکام کو اس سلسلے میں تہران کے ساتھ ضروری تعاون کرنا چاہیے۔ 
انہوں نے بتایا کہ اب تک کی اطلاعات کے مطابق سانحہ منی میں ایک سو انہتر(169) ایرانی حجاج کرام جاں بحق اور پینتالیس زخمی ہیں جن میں متعدد آج استپالوں سے ڈسچارج کردیئے جائیں گے۔ انہوں بتایا کہ دو سو پچانوے ایرانی حجاج کرام بدستور لاپتہ ہیں اور ان کی تلاش کا کام جاری ہے۔ 


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Sunday - 2018 july 22