Saturday - 2018 Nov 17
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 86166
Published : 28/10/2015 18:16

امریکہ میں اسلحہ خریدنا کتاب خریدنے سے زیادہ آسان

امریکہ کے صدر براک اوباما نے ملک میں اسحلہ کی آزادانہ خرید و فروخت پر کڑی نکتہ چینی کی ہے۔

صدر براک اوباما نے اپنے ایک خطاب میں کہا کہ امریکہ میں اسلحہ خریدنا کتاب خریدنے سے زیادہ آسان ہے۔ انہوں نے کہا کہ گیارہ ستمبر کے واقعے کے بعد سے تقریبا چار لاکھ امریکی فائرنگ کے واقعات میں ہلاک ہوچکے ہیں جبکہ اسی مدت کے دوران سو سے بھی کم امریکی شہری ملک میں دہشت گردی کے واقعات میں مارے گئے۔

امریکی صدر نے کہا کہ چار لاکھ افراد کا مارا جانا ایسا ہی ہے جیسے کلائیولینڈ یا مینا پولیس جیسے شہروں کی پوری کی پوری آبادی کو قتل کردیا جائے۔ صدر براک اوباما نے ملک میں اسلحے تک آسان دسترسی پر کڑی نکتہ چینی کرتے ہوئے کہا کہ ‎سڑکوں اور شاہراہوں پر اسلحے کی بہتات امریکی سماج کو محفوظ نہیں بناسکتی۔

 قابل ذکر ہے کہ امریکہ میں ہرسال فائرنگ کےواقعات روز کا معمول بنتے جارہے ہیں اور صرف رواں ماہ اکتوبر کے آغاز سے اب تک اسکولوں میں فائرنگ کے تین واقعات رونما ہوچکے ہیں۔ رائے عامہ کے تازہ ترین جائزے کے مطابق پچاس فی صد امریکی شہری گن کنٹرول ایکٹ کو مزید سخت بنائے جانے کے خواہاں ہیں۔


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Saturday - 2018 Nov 17