Wed - 2018 Sep 26
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 86170
Published : 28/10/2015 18:46

ایران اور پاکستان کا ساتھ علاقے میں امن و ثبات کا عامل

اسلامی جمہوریہ ایران کی اعلی قومی سلامتی کونسل کے سیکریٹری نے کہا ہے کہ ایران اور پاکستان کے درمیان گہرے تعلقات اور مشترکہ موقف بالخصوص مشرق وسطی کے مشرقی علاقوں میں ہمیشہ امن و استحکام کا عامل رہا ہے۔

ایران کی اعلی قومی سلامتی کونسل کے سیکریٹری علی شمخانی نے بدھ کی صبح اسلام آباد پہنچنے پر صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے پاکستان کی پوزیشن کو بالخصوص علاقے میں امن و استحکام کے قیام میں اہم قرار دیا اور تاکید کی کہ ایران اور پاکستان کے درمیان اچھے تعلقات تاریخی نوعیت کے ہیں کہ جن کا علاقے میں استحکام قائم کرنے اور اسے مضبوط بنانے کے لئے جائزہ لیا جا سکتا ہے-

علی شمخانی نے اس بات کا ذکر کرتے ہوئے کہ ان کے دو روزہ دورہ اسلام آباد کا ایک مقصد جامع مشترکہ ایکشن پلان کے بعد ایران اور پاکستان کے تعلقات میں پیدا ہونے والے ماحول کے سلسلے میں گفتگو کرنا ہے، کہا کہ ایران  جامع مشترکہ ایکشن پلان کے بعد کے ماحول میں علاقے کے ممالک کے ساتھ تعاون کو مضبوط بنانے کے لئے تمام ممکنہ صلاحیتوں کو فعال بنانا چاہتا ہے-

ایران کی اعلی قومی سلامتی کونسل کے سیکریٹری نے کہا کہ تمام ثقافتی، سیکورٹی، دفاعی ، سیاسی اور اقتصادی میدانوں میں ایران اور پاکستان کے تعلقات میں فروغ کے بہت سے امکانات موجود ہیں اور ان تعلقات کے فروغ سے دہشت گردی، کہ جو آج عالم اسلام کا ایک بنیادی مسئلہ ہے،  کے خلاف جنگ میں اہم کردار ادا کیا جا سکتا ہے -

علی شمخانی نے اپنے پاکستانی ہم منصب کی دعوت پر انجام پانے والے اس دورے کا ایک اور مقصد، اس ملک میں زلزلہ متاثرین اور حکومت کے ساتھ اظہار ہمدردی کرنا اور تعزیت پیش کرنا بتایا- اسلامی جمہوریہ ایران کی اعلی قومی سلامتی کونسل کے سیکریٹری پاکستان کے اعلی حکام سے ملاقات و گفتگو کے لئے بدھ کو علی الصبح اسلام آباد پہنچے-


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Wed - 2018 Sep 26