Monday - 2018 August 20
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 86251
Published : 31/10/2015 7:42

شہر تعز کے حالات نہایت ابتر ہیں

اقوام متحدہ نے یمن کے شہر تعز کے ابتر حالات پر تشویش کا اظہار کیا ہے۔

اقوام متحدہ نے یمن کے شہر تعز کے نہایت نامناسب حالات پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ امدادی ٹیموں کو عوام تک رسائی حاصل نہیں ہے جس کی وجہ سے لاکھوں افراد کو غذائی اشیاء سے محرومی اور بھوک مری کا خطرہ لاحق ہے۔ 

ارنا کی رپورٹ کے مطابق عالمی تنظیم خوراک نے جمعرات کو ایک بیان جاری کرکے کہا ہے کہ امدادی ٹیمیں ایک ماہ سے لوگوں کو امداد پہنچانے کی منتظر ہیں۔ شہر تعز کے جنوبی علاقے میں جو ہرلحاط سے محرومیت کا شکار ہے دولاکھ چالیس ہزار افراد کو آل سعود کی جارحیت کے نتیجے میں شدید مشکلات کا سامنا ہے-

ادھرعالمی تنطیم خوراک کے عھدیدار مہند ھادی نے خبردار کیا ہے کہ اگر عوام کو امداد نہ پہنچائی گئی تو تعز کے عوام المیے سے دوچار ہوجائیں گے۔ مہند ھادی نے کہا کہ تعز کے عوام غذاکی قلت اور بھوک مری کا شکار ہیں اور اگر یہ صورتحال جاری رہی تو ناقابل تلافی نقصان ہوگا۔

عالمی تنظیم خوراک نے اپنی ایک رپورٹ میں کہا ہے کہ یمن کے بائیس صوبوں میں سے دس صوبوں میں عنقریب مکمل قحط سالی کی صورتحال پیدا ہوجائے گی-  اس رپورٹ میں آیا ہے کہ آل سعود کی حکومت کے سمندری اور فضائی محاصرے کی وجہ سے یمن میں ضروری اشیاء کی شدید قلت ہوچکی ہے۔

اس رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ مارچ سے آل سعود اور اسکے اتحادیوں کے حملوں کے شروع ہونے کےبعد سے یمن میں بھوکوں کی تعداد میں مزید تیس لاکھ افراد کا اضافہ ہوا ہے


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Monday - 2018 August 20