Thursday - 2018 Nov 22
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 87139
Published : 11/11/2015 18:53

رمادی کی آزادی کے آپریشن کا پہلا مرحلہ کامیابی سے مکمل: عراقی فوج کی مشترکہ کمان کے ترجمان کا بیان

عراقی فوج کی مشترکہ کمان نے اعلان کیا ہے کہ مغربی صوبے الانبار کے صدر مقام الرمادی کی آزادی کے لیے جاری آپریشن کا پہلا مرحلہ پوری کامیابی کے ساتھ مکمل ہوگیا ہے۔ عراقی فوج کی مشترکہ کمان کے ترجمان یحی رسول نے اسکائی نیوز سے بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ الرمادی آپریشن کا پہلا مرحلہ کامیابی کے ساتھ مکمل ہو گیا ہے اور ہم نے مطلوبہ اہداف کو حاصل حاصل کر لیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ رمادی آپریشن کا دوسرا مرحلہ جلد شروع کیا جائے گا۔ 
عراقی فوج کی مشترکہ کمان کے ترجمان نے کہا کہ رمادی شہر اس وقت پوری طرح سے فوج کے محاصرے میں ہے اور فوج کے جوان جلد ہی شہر کے اندر داخل ہونے میں کامیاب ہو جائیں گے۔ انہوں نے کہا کہ عراقی فوج نے پہلے مرحلے میں راستے میں حائل رکاوٹوں کو صاف اور بموں اور باروردی سرنگوں کو ناکارہ بنا دیا ہے جس کے باعث ہم اب تیزی کے ساتھ پیشقدمی کر سکیں گے۔
دوسری جانب عراقی وزارت داخلہ نے بتایا ہے کہ فضائیہ کے لڑاکا طیاروں نے رمادی شہر پر پانچ لاکھ پمفلٹ گرائے ہیں جن میں شہریوں سے اپیل کی گئی ہے کہ وہ دہشت گردوں کے مراکز سے دور رہیں اور ان راستوں کے ذریعے شہر سے فوری طور پر باہر نکل جائیں جنہیں عراقی فوج نے شہریوں کے انخلا کے لئے محفوظ بنا دیا ہے۔ 
اس سے پہلے عراقی فوج کے چیئرمین جوائنٹ چیف آف اسٹاف جنرل عثمان الغانمی نے بھی کہا تھا کہ ہم طے شدہ منصوبے کے مطابق پیشقدمی کر رہے ہیں جس سے داعش کی کمزوری کا پتہ چلتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ رمادی شہر کو بہت جلد دہشت گرد گروہ داعش کے قبضے سے آزاد کرا لیا جائے گا۔ 
قابل ذکر ہے کہ عراقی سیکورٹی فورس اور عوامی رضاکار، فضائیہ کی مد د سے پیشقدمی کرتے ہوئے رمادی شہر کو چاروں طرف اپنے گھیرے میں لینے میں کامیاب ہو گئے ہیں اور شہر کے اندر داخل ہونے کے لیے تیار ہیں۔


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Thursday - 2018 Nov 22