Wed - 2018 Sep 26
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 87354
Published : 15/11/2015 17:32

حزب اللہ لبنان کے سربراہ کی جانب سے داعش کے جرائم کی مذمت

حزب اللہ لبنان کے سربراہ نے پیرس میں داعش کے وحشیانہ جرائم کی مذمت کی ہے- حزب اللہ نے فرانس میں داعش کے دہشت گردانہ جرائم اور بے گناہوں کے قتل عام کی مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ ہم فرانس کے عوام کے ساتھ اظہار یکجہتی کرتے ہیں-
حزب اللہ لبنان کے سربراہ سید حسن نصر اللہ نے سنیچر کی رات ایک خطاب میں پیرس میں جمعہ کی رات ہونے والے دہشت گردانہ دھماکوں کی مذمت کرتے ہوئے کہا کہ فرانس اور لبنان میں ہونے والے دہشت گردانہ واقعات نے ثابت کردیا کہ دہشت گرد ، جرائم انجام دینے میں کسی حد و حدود اور سرحد کا پاس و لحاظ نہیں رکھتے اور ان سے جنگ کے لئے سب کا تعاون ضروری ہے- سید حسن نصر اللہ نے کہا کہ جمعرات کی رات جنوبی بیروت میں دہشت گردانہ کارروائی کرنے والے دہشت گرد گروہ کے اصلی عناصر اس وقت لبنان کے سیکورٹی اہلکاروں کی حراست میں ہیں جو ان اہلکباروں کی ایک بڑی کامیابی ہے اور ہم ان کا شکریہ ادا کرتے ہیں- حزب اللہ کے سربراہ نے اس بات کا ذکر کرتے ہوئے کہ تکفیریت کا منصوبہ فتنہ برپا کرنے اور معاشروں کو تباہ و برباد کرنے پر مبنی ہے کہا کہ ہم لبنانیوں اور خاص طور سے حزب اللہ کے جوانوں سے کہتے ہیں کہ ہمیں ہمیشہ یہ یاد رکھنا چاہئے کہ اصلی دشمن اسرائیل اور دہشت گرد ہیں جن کا مقصد لبنان میں داخلی جنگ چھیڑنا ہے- انھوں نے خبردار کیا کہ بعض لوگ ملت فلسطین کو مصریوں، شامیوں اور لبنانیوں کا دشمن ظاہر کرنے کی کوشش کر رہے ہیں جبکہ فلسطینیوں کو ان جرائم کا ذمہ دار قرار نہیں دیا جا سکتا جو تکفیری دہشت گرد انجام دے رہے ہیں- حزب اللہ لبنان کے سربراہ سید حسن نصر اللہ نے اس بات کا ذکر کرتے ہوئے کہ تکفیری دہشت گرد گروہ اور خاص طور سے داعش کی نابودی کا وقت قریب ہے اور ان کی عمر کم ہے اور وہ عراق اور شام میں مسلسل نقصان اٹھا رہے ہیں اور بری طرح شکست کھا رہے ہیں تاکید کے ساتھ کہا کہ چاہے جنگ کا زمانہ ہو یا امن کا داعش کی کوئی حیثیت اور مستقبل نہیں ہوگا-


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Wed - 2018 Sep 26