Monday - 2018 Dec 17
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 88007
Published : 24/11/2015 9:48

پوتن: گیس پیداکرنے والے اور صارف ملکوں کے درمیان تعاون ضروری ہے

روسی صدر نے دنیا میں گیس پیدا کرنے والے اور صارف ملکوں کے درمیان وسیع تعاون کی ضرورت پر تاکید کی ہے-

فارس نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق روسی صدر ولادیمیر پوتن نے پیر کی شام کو تہران میں گیس برآمد کرنے والے ملکوں کے سربراہی اجلاس میں گیس پیدا کرنے والے اور صارف ملکوں کے درمیان تعاون جاری رہنے پر تاکید کرتے ہوئے کہا کہ پائیدار ترقی کے لئے یہ تعاون ضروری اور لازم ہے

روس کے صدر نے اس جانب اشارہ کرتے ہوئے کہ گیس برآمد کرنے والے ممالک کی تنظیم جی ای سی ایف کی تشکیل کو چودہ برس کا عرصہ گذر چکا ہے کہا کہ اس تنظیم کے ممبر ممالک کے اختیار میں، دنیا میں گیس کی پیداوار کا اناسی فیصد حصہ ہے- روسی صدر نے کہا کہ ہر سال گیس کے استعمال میں اضافہ ہو رہا ہے اور دوہزار چالیس تک گیس کی مانگ میں بتیس فیصد اضافہ ہوجائے گا جو پانچ ٹریلین مکعب میٹر پہنچ جائے گی- پوتن نے گیس منڈی میں موجود نئی ٹکنالوجیز کا ذکر کرتے ہوئے کہا یہ ٹکنالوجیاں، گیس کی منڈی اور اس کی تجارت میں تغیرات لاسکتی ہیں-

روسی صدر نے ایران کی میزبانی کی قدردانی کرتے ہوئے امید ظاہر کی کہ جی ای سی ایف کے تمام ممبر ملکوں اور ان ملکوں کے تعاون سے، جو گیس کی پیداوار اور برآمدات کے شعبے میں تعاون کرنا چاہتے ہیں، اپنے معینہ اہداف تک پہنچا جا سکتا ہے- گیس برآمد کرنے والے ملکوں کی تنظیم جی ای سی ایف کا سربراہی اجلاس پیر کے روز تہران میں منعقد ہوا جس میں دنیا کے نو ملکوں کے سربراہ شریک تھے اور یہ اجلاس پیر کی رات کو ایک بیان جاری کرنے کے ساتھ ہی اختتام پذیر ہوگیا-


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Monday - 2018 Dec 17