Friday - 2018 Nov 16
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 88073
Published : 24/11/2015 18:16

یمنی عوام کا مظاہرہ

یمنی عوام نے ایک بار پھر اپنے ملک پر سعوی جارحیت کے خلاف مظاہرے کئے ہیں۔

المسیرہ ٹی وی کے مطابق ہزاروں کی تعداد میں یمنی شہری دارالحکومت صنعا کی مختلف سڑکوں پر مارچ کرتے ہوئے اقوام متحدہ کے نمائندہ دفتر کے سامنے جمع ہوئے اور انہوں نے سعودی جارحیت بند کرانے کا مطالبہ کیا۔

مظاہرین کا کہنا تھا کہ سعودی جارحیت پر اقوام متحدہ سمیت تمام عالمی اداروں کی خاموشی و لاتعلقی، قابل مذمت ہے۔

مظاہرین نے اقوام متحدہ سے مطالبہ کیا کہ وہ یمنی عوام کے خلاف جارحیت رکوانے کے لئے سعودی حکومت پر دباؤ ڈالے۔

مظاہرین نے سعودی عرب کی جانب سے اپنے ملک کا فضائی، سمندری اور زمینی محاصرہ بھی ختم کرانے کا مطالبہ کیا تاکہ عوام تک انسان دوستانہ امداد، کھانے پینے کی اشیا اور ایندھن کی ترسیل کو یقینی بنایا جاسکے۔

ادھر اقوام متحدہ کے انسان دوستانہ امداد کے کوآرڈی نیٹر نجیب الغفور نے کہا ہے کہ یمن کے عوام، سعودی جارحیت کے خلاف مشتعل ہیں اور عالمی اداروں سے مطالبہ کر رہے ہیں کہ وہ سعودی جارحیت بند کرانے کے لئے اپنا کردار ادا کریں۔

سعودی عرب، پچھلے آٹھ ماہ سے اپنے اتحادیوں اور امریکہ کی حمایت سے یمن کو جارحیت کا نشانہ بنا رہا ہے۔ چھبیس مارچ سے جاری اس جارحیت کے نتیجے میں سات ہزار سے زیادہ یمنی شہری شہید اور چودہ ہزار سے زائد زخمی ہو چکے ہیں، جبکہ اس جارحیت میں مشرق وسطی کے اس غریب اور عرب اسلامی ملک کی بنیادی تنصیبات کو بھی بھاری نقصان پہنچا ہے۔ 


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Friday - 2018 Nov 16