Tuesday - 2018 Dec 11
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 186076
Published : 7/3/2017 17:20

بیوی سے اظہار محبت(۳)

اگرچہ بیوی سے میاں کی محبت قلبی ہونی چاہیئے تاکہ اس کے دل میں بھی اثر کرے چونکہ دلوں کے روابط دلوں سے ہی ہوتے ہیں لیکن صرف قلبی محبت پر اکتفاء نہیں کرنا چاہیئے بلکہ واضح انداز میں اس کا اظہار بھی کرنا چاہیئے اور اس صورت میں بہتر نتیجہ کی امید لگائی جاسکتی ہے کہ جب محبت کے اثرات انسان کی زبان، افعال اور کردار سے نمایاں ہوں۔


ولایت پورٹل:قارئین کرام ہم نے شوہر پر بیوی کے حقوق سے متعلق جس سلسلہ کا آغاز کیا تھا اس میں شوہر کا بیوی سے اظہار محبت کرنا ایک اہم باب ہے الحمد للہ اس عنوان پر آج آخری کڑی آپ کی حسن نظر و عنایت کی محتاج ہے،لہذا اس سیریز کو مکمل پڑھنے کے لئے نیچے دیئے گئے لنکس پر کلک کیجئے!
بیوی سے اظہار محبت(۱)
بیوی سے اظہار محبت(۲)
گذشتہ سے پیوستہ:گھر  میں حاکم  محبت اور عشق  دوسری تمام چیزوں سے زیادہ با اہمیت ہے اسی وجہ سے خداوند عالم نے قرآن مجید میں اس کو اپنی قدرت کے آثار اور اپنی عظیم نعمتوں میں شمار کیا ہے اور اس کے سبب اپنے بندوں پر احسان جتاتے ہوئے ارشاد فرماتا ہے : اور خدا کی نشانیوں میں سے یہ ہے کہ اس نے تمہارے لئے  تمہاری جنس میں ہی سے  تمہارا جوڑا پیدا کیا ہے تاکہ تمہیں اس سے سکون حاصل ہو اور پھر تمہارے درمیان محبت اور رحمت قرار دی ہے کہ اس میں صاحبان فکر کے لئے بہت سی نشانیاں پائی جاتی ہیں۔(۱)
اور حضرت امام جعفر صادق علیہ السلام ارشاد فرماتے ہیں:عورت  کی تخلیق  مرد سےہوئی  ہے لہذا اس کی تمام توجہ مرد کی طرف ہوتی ہے پس اپنی بیویوں سے محبت کرو۔(۲)
نیز صادق آل محمد ایک دوسرے مقام پر ارشاد فرماتے ہیں:جو بھی ہمارے چاہنے والوں میں سے ہو اسے چاہیئے کہ اپنی شریک حیات سے زیادہ سے زیادہ اظہار محبت کیا کرے۔(۳)
پیغمبر اکرم(ص) نے ارشاد فرمایا :جس انسان کا ایمان جتنا کامل ہو گا وہ  اتنا ہی زیادہ اپنی بیوی سے محبت کرے گا۔(۴)
امام جعفر صادق علیہ السلام ارشاد فرماتے ہیں:انبیاؑء الہی  کے اخلاق  میں سے ایک یہ ہے کہ وہ اپنی بیویوں سے بہت زیادہ محبت کرتے تھے۔(۵)
جناب ختمی مرتبت(ص) نے ارشاد فرمایا:مرد کا اپنی زوجہ سے یہ کہنا: کہ واقعاً میں تم سے  بہت محبت کرتا ہوں، یہ جملہ کبھی اس کے دل سے نہیں نکلے گا۔(۶)
اگرچہ بیوی سے میاں کی محبت قلبی ہونی چاہیئے تاکہ اس کے دل میں بھی اثر کرے چونکہ دلوں کے روابط دلوں سے ہی ہوتے ہیں لیکن صرف قلبی محبت پر اکتفاء نہیں کرنا چاہیئے بلکہ  واضح انداز میں اس کا اظہار بھی کرنا چاہیئے  اور اس صورت میں بہتر نتیجہ کی امید لگائی جاسکتی ہے کہ جب محبت کے اثرات  انسان کی زبان، افعال اور کردار سے نمایاں ہوں۔
آپ بغیر کسی ہچکچاہٹ اور احتیاط کے اپنی شریک حیات کے سامنے اپنی محبت اور عشق کا برملا اظہار کرسکتے ہیں،آپ اس کے سامنے اور اس کی غیر موجودگی میں اس کی تعریف کریں اگر آپ سفر پر گئے تو اس کے لئے کوئی خط لکھیں اور درد فراق کی داستان کو تحریر کریں کبھی کوئی تحفہ خرید کر اسے ہدیہ کریں اگر ٹیلفون کرسکتے ہیں تو کبھی اس کے حال و احوال دریافت کرلیں۔
وہ امور کہ جنہیں کبھی خواتین نہیں بھولتی ان میں سے ایک یہی حقیقی عشق و محبت ہے جو شوہر ان کی نسبت کرتے ہیں  مزید وضاحت کے لئے ذیل میں مرقوم قصہ پر توجہ فرمائیں:  
ایک خاتون جس کا نام ۔۔۔۔۔ تھا   اس نے  روتے ہوئے اپنی داستان حیات اس طرح بیان کی ہے کہ موسم خزاں کی ایک رات میں نے ایک جوان سے شادی کی  اور ایک زمانہ تک ہم دونوں نہایت آرام و سکون سے زندگی گذارتے رہے  اور میں خود کو روئے زمین کی سب سے خوش قسمت عورت تصور کرتی تھی، میں نے اپنی زندگی کے چھ سال ایک چھوٹے سے گھر میں گذار دئے کہ جس کو میرے شوہر نے میری خاطر بنایا تھا یہاں تک کہ ایک دن میری خوشی کا ٹھکانہ نہ رہا  چونکہ اللہ  کے فضل سے میں حاملہ ہوگئی تھی  جب میں نے یہ خبر اپنے شوہر کو دی  اس نے مجھے  گلے لگا کر بچوں کی طرح رونے لگے  اور باپ بننے کے شوق میں اتنا روئے کہ کئی مرتبہ  قریب تھا کہ زمین پر گر جائے پس اس کے بعد وہ باہر گئے  اور اپنے جمع پونجی میں سے میرے لئے ہیرے کا ایک گلوبند خریدا اور جس وقت انہوں نے اسے مجھے دیا تو کہا:میں اس گلوبند کو دنیا کی اس بہترین خاتون کی خدمت میں پیش کررہا ہوں کہ جس سے بہتر میں نے کسی کو نہیں پایا،لیکن افسوس ابھی کچھ دن بھی نہ گذرے تھے  کہ وہ  ایک ڈرائیونگ حادثہ میں جاں بحق ہوگئے۔(۷)

.......................................................................................................................................................................................

حوالہ جات:
۱۔سورہ روم:آیت 21 ۔
۲۔بحار الانوار ، ج 103 ، ص 226 ۔
۳۔بحار الانوار، ج 103، ص 223 ۔
۴۔بحار الانوار،ج 103، ص 228 ۔
۵۔بحار الانوار، ج 103، ص 236 ۔
۶۔شافی، ج 2، ص 138 ۔
۷۔مجلہ اطلاعات، 6 بہمن  1368 ۔


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Tuesday - 2018 Dec 11