Saturday - 2018 Nov 17
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 186773
Published : 19/4/2017 16:28

آل سعود اور امریکہ کے درمیان یمن کے خلاف ایک اور معاہدہ

یمنی ذرائع ابلاغ نے خبر دی ہے کہ یمن پر میزائل حملوں شروع کرنے کے سلسلہ میں سعود ی عرب اور امریکہ کے درمیان ایک اور معاہدہ ہوا ہے جس کے تحت ہوائی حملوں کے بجائے اب پانی سے حملے کیےجائیں گے۔


ولایت  پورٹل:اعلیٰ سیاسی ذرائع کے مطابق اس معاہدہ  میں یہ بھی آیا ہے کہ اب سعودی لڑاکا یمن پر حملے نہیں کریں گے بلکہ یہ حملہ اب امریکی جنگی بیڑے انصار اللہ کے ٹھکانوں پر میزائل حملے کریں  جیسے شام میں کیے تھے ،یاد رہے کہ کل سے  امریکی وزیر خارجہ جیمز میٹس سعودی عرب کے دورہ پر ہیں  جہاں انھوں نے ملک سلمان سے ملاقات کے بعد کہا: امریکہ سعودی عرب کا  اتحادی ہے  اور ہمارا مقصد ہے کہ یمن کی سب مزاحمتی تنظیموں سے مذاکرات کیے جائیں لیکن یمن کی جنگ طویل ہوتی چلی جارہی ہے  جہاں دونوں طرف سے بھاری مقدار میں جانی اور مالی نقصان ہورہا ہے ۔
ایرنا





آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Saturday - 2018 Nov 17